پوسٹ مارٹم کے لیے مردہ خانے لائی گئی خاتون زندہ نکلی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بھارت میں ایک خاتون کو ڈاکٹروں کی جانب سے مرہ قرار دیے جانے کے بعد چونکا دینے والا واقعہ سامنے آیا ہے۔ خاتون کو مردہ قرار دے کر اسے پوسٹ مارٹم کے لیے مردہ خانے لے جایا گیا۔ خاتون کے شوہر نے پوسٹمارٹم روم میں لے جانے سے قبل بیوی کا ہاتھ پکڑ کراس کی نبض معلوم کی تو وہ معمول کے مطابق جاری تھی اور دل کی دھڑکن بھی چل رہی تھی۔ شوہر نے بیوی کو وہاں سے فورا نکالا اور اسپتال لایا گیا۔ استال میں معلوم ہوا کہ اس کے دل کی دھڑکن اور سانسیں باقاعدگی سے کام کر رہی ہیں۔ اسے انتہائی نگہداشت کے یونٹ میں منتقل کر دیا گیا۔ لواحقین نے اس واقعہ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ واقعہ بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں پیش آیا۔ پوسٹ مارٹم روم سے واپس لائی گئی زندہ خاتون کے معاملے پراسپتال میں ہنگامہ برپا ہو گیا۔ ڈاکٹروں پر خاتون کی حالت اور اس سےدیکھنے میں انتہائی غفلت کا مظاہرہ کرنے کا الزام عاید کیا گیا۔

ڈاکٹروں نے تشویشناک حالت میں علاج کے لیے اسپتال پہنچنے والی خاتون کی موت کا اعلان کیا۔ اس کا معائنہ کیا گیا اور براہ راست موت کا اعلان کردیا جب کہ کسی بھی مریض کی موت کا اعلان کرنے سے پہلے الیکٹرو کارڈیوگرام کرنا ضروری تھا لیکن ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹر اور اینستھیزیالوجسٹ نے خاتون کو مردہ قرار دے کر پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا۔

اب خاتون کا دوبارہ علاج کیا جا رہا ہے جب کہ اسپتال انتظامیہ نے واقعے کی تحقیقات کا آغاز کرتے ہوئے واقعے کا سبب بننے والے ڈاکٹر کے خلاف کارروائی شروع کردی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں