دبئی میں ورچوئل اثاثوں کے نظم سے متعلق پہلے قانون کی منظوری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

حاکمِ دبئی شیخ محمد بن راشدآل مکتوم نے بدھ کے روز اپنے ٹویٹراکاؤنٹ پراطلاع دی ہے کہ امارت نے ورچوئل اثاثوں کے نظم سے متعلق اپنے پہلے قانون کی منظوری دے دی ہے۔

انھوں نے بتایا ہے کہ دبئی نے ریگولیشن، لائسنسنگ اور گورننس کے حوالے سے ورچوئل اثاثوں اورکاروباری ماحول کی ترقی کی نگرانی کے لیے ایک آزاد اتھارٹی بھی قائم کی ہے۔

اسی بیان میں حاکم دبئی نے کہا کہ’’ہم نے ورچوئل اثاثوں کو ریگولیٹ کرنے کے قانون کی منظوری دی ہے اور بہترین بین الاقوامی طریقوں کے مطابق اس قانون کے نفاذ کی نگرانی کے لیے ایک آزاد ریگولیٹری ادارہ قائم کیا ہے‘‘۔

انھوں نے مزید کہا کہ’’ہمارا یہ اقدام مستقبل کی جانب ایک چھلانگ ہے۔اس کا مقصد اس شعبے کوترقی دینا اور اس میں تمام سرمایہ کاروں کو تحفظ مہیّا کرنا ہے‘‘۔

خطے کامالیاتی مرکزدبئی علاقائی اقتصادی مسابقت میں تیزی کے ساتھ ساتھ کاروبار کی نئی شکلوں کو راغب کرنے کے لیے ورچوئل اثاثوں کے تحفظ کا ضابطہ تیار کرنے پر زوردیتارہا ہے۔ اس نے حالیہ برسوں میں غیرقانونی دولت کا محفوظ مرکز ہونے کی شہرت پر قابو پانے کے لیے بھی مالیاتی قواعد وضوابط کو سخت کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں