اتحاد کی افواج پوری طرح تیار ہیں : نیٹو سکریٹری جنرل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

شمالی اوقیانوس کے اتحاد "نیٹو" کے سکریٹری جنرل ینس اسٹولٹنبرگ کا کہنا ہے کہ اتحاد کی افواج پوری تیاری کی حالت میں ہیں اور "ہم نیٹو اتحاد کے رکن ممالک میں امن مضبوط بنانے کے لیے کام کر رہے ہیں"۔

آج بدھ کے روز امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کے ساتھ ایک پریس کانفرنس میں ینس نے کہا کہ امریکا کی جانب سے مزید فوجیوں کو یورپ بھیجنا ایک بھرپور پیغام ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ مشرقی یورپ کے ممالک نیٹو اتحاد کا ایک اہم جزو ہیں۔

ینس نے زور دیا کہ نیٹو اتحاد کے ممالک روسی آپریشن کے خلاف یوکرین کی سپورٹ میں متحد رہیں گے۔

نیٹو ممالک کے وزرائے دفاع نے امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کی قیادت میں اجلاس کے دوران مشرقی یورپ مزید نیٹو فوجیوں کو بھیجنے کے منصوبوں پر بات چیت کی۔ اس حوالے سے ممکنہ تبدیلیاں زیر بحث آئیں۔

پولینڈ نے مطالبہ کیا تھا کہ اوقیانوسی "امن مشن" تشکیل دیا جائے جو یوکرین کی مدد کے لیے مسلح افواج کا تحفظ رکھتی ہو۔

ینس اسٹولٹنبرگ نے اپنے بیان میں کہا کہ 30 ممالک پر مشتمل نیٹو اتحاد یورپ میں مستقبل میں اپنی سیکورٹی پوزیشن کے حوالے سے بنیادی تبدیلیاں کرنے کے درپے ہیں۔ یہ اقدام یوکرین میں روسی جنگ کے جواب میں عمل میں لایا جائے گا۔

نیٹو کے سکریٹری جنرل نے توقع ظاہر کی ہے کہ اتحادی ممالک کے وزرائے دفاع نیٹو میں عسکری قیادت کو یہ ذمے داری سونپیں گے کہ وہ مشرقی یورپ میں امن کو مضبوط بنانے کے لیے اقدامات کریں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں