امریکی صدر کی زبان پھسل گئی، اپنی نائب صدر کو’خاتون اول‘ کہہ دیا

جوبائیڈن کی غلطی پر پریس کانفرنس میں قہقے بلند ہوگئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

حال میں پاکستان میں پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی ایک تقریر میں مبینہ طورپر زبان پھسل جانے کے بعد ان کی زبان سے ادا ہونے والے الفاظ سوشل میڈیا ٹرینڈ کرنے لگے۔ دوسری طرف انکل سام کے دیس کے سربراہ جوبائیڈن کی بھی زبان پھسل گئی اور وہ اپنی نائب کو’خاتون اول‘ کہہ بیٹھے۔

صدر جوبائیڈن وائٹ ہاؤس میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے۔ اس موقعے پرانہوں نے نائب صدر کمیلا ہیرس کے شوہرکے کرونا کا شکار ہونے کی تصدیق کی مگر یہاں پر ان کی زبان لڑکھڑا گئی۔ وہ یہ کہنا چاہ رہے تھے کہ ان کی نائب کے شوہر ڈیگ امہوف کرونا کا شکار ہوگئے ہیں مگر ان کی زبان سے غلطی سے’خاتون اول کے شوہر‘ کرونا کا شکار ہوگئے ہیں۔ ان کے یہ الفاظ سن کر پریس کانفرنس میں قہقے بلند ہوئے کیونکہ خاتون اول کے شوہر تو وہ خود ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ خاتون اول کا شوہر کرونا کا شکار ہوگیا جس پر حاضرین میں قہقہے لگ گئے کیونکہ یہ شوہر خود بائیڈن ہیں۔ بات یہیں نہیں رکی بلکہ انہوں نے اپنی غلطی کی اصلاح کی کوشش کی مگر پھر غلطی کرگئے۔ انہیں کہنا تھا کہ ’مرد ثانی‘ کرونا کا شکار ہوئے ہیں بلکہ ان کی زبان سے ’خاتون ثانی‘ نکل گیا حالانکہ وائٹ ہاؤس میں یہ لقب کسی کو نہیں دیا گیا۔

وائٹ ہاؤس نے منگل کے روز اعلان کیا کہ کیملاہیریس کے شوہر امہوف کو کرونا وائرس ہوا ہے۔ ہیریس نے انفیکشن کا پتہ لگانے کے لیے معائنہ کروایا تھا مگران کے ٹیسٹ کا نتیجہ منفی آیا تھا۔

ہیرس کی نائب ترجمان، سبرینا سنگھ نے کہا کہ نائب صدر کا ایک ٹیسٹ ہوا اور نتیجہ منفی آیا اور وہ چیک اپ کرواتی رہیں گی۔

واضح رہے کہ خاتون نائب صدر کے شوہرہونے کی وجہ سے امہوف کو "مر ثانی " کا خطاب دیا گیا۔ کرونا کے شبے کی وجہ سے ہیرس نے خواتین کے عالمی دن کی تقریبات میں شرکت نہیں کی۔

امریکی صدر جو بائیڈن نے سامعین کو بتایا کہ ہیریس نے کوئی خطرہ مول نہ لینے کو ترجیح دی۔ آج وہ ہمارےساتھ نہیں مگران کا یہ فیصلہ درست ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں