روس اور یوکرین

روسی توپ خانہ بمباری کی تیاری میں کیف کی طرف بڑھ رہا ہے: پینٹا گان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

واشنگٹن میں العربیہ کے نامہ نگار کے مطابق جمعرات کو امریکی محکمہ دفاع کے ایک اہلکار نے تصدیق کی ہے کہ روسی افواج اپنے توپ خانے کو دارالحکومت کیف کی طرف منتقل کر رہی ہیں اور اس پر بمباری کی تیاری کی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ انٹیلی جنس اندازوں کے مطابق بحیرہ اسود میں جنگی بحری جہاز مشرقی یوکرین کے شہر اوڈیسا کے اطراف میں حملے کی تیاری کر رہے ہیں۔

امریکی اہلکار نے یہ بھی واضح کیا کہ روسی فوجی قافلے ابھی تک کسی ٹھوس نقل و حرکت کے بغیر پھنسے ہوئے ہیں اور وہ دارالحکومت کیف سے 15 سے 25 کلومیٹر کے فاصلے پر ہیں۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ یوکرین کو ملنے والا نیا سامان اسے روسی افواج کا قریبی فاصلے سے مقابلہ کرنے کی سہولت دے گا جیسا کہ خارخیو، کیف اور چرنیف کے آس پاس ہوا تھا۔

اس تناظر میں ایک سینیر امریکی اہلکار نے تصدیق کی ہے کہ روس نے فوجی آپریشن کے آغاز سے لے کر اب تک یوکرینی اہداف پر ایک ہزار سے زائد میزائل داغے ہیں جو کہ ’رایٹرز‘ کے مطابق اب اپنے چوتھے ہفتے میں داخل ہو چکا ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ 24 فروری کو روسی فوجی آپریشن کے آغاز کے بعد سے کیف کے اتحادی یورپی ممالک اور امریکا کی سربراہی میں بالعموم نیٹو ممالک نے یوکرین کو بہت سے دفاعی ہتھیار بھیجے ہیں۔

ان میں سے بہت سے ممالک نے یوکرین کی حکومت اور بے گھر افراد کے لیے بھی مالی امداد مختص کی ہے۔

اس کے علاوہ ماسکو پر ہزاروں پابندیاں عائد کی گئیں جن میں مختلف شعبوں کے ساتھ ساتھ کئی سیاست دانوں اور تاجروں پر بھی پابندیاں لگائی گئیں۔

جب کہ ماسکو نے ایک سے زیادہ بار خبردار کیا ہے کہ کوئی بھی ملک خطرناک ہتھیار یوکرین کو فراہم کرے گا تو روس ان ہتھیاروں کی فراہمی کو اپنے لیے جارحیت قرار دے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں