’خود کش بمبار نے خاتون رکن پارلیمنٹ کو گلے لگایا اور دھماکا کردیا‘

صومالیہ: خود کش حملے میں خاتون رکن پارلیمنٹ سمیت 15ا فراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پولیس نے جمعرات کو بتایا کہ دیہی وسطی صومالیہ میں ایک پولنگ سٹیشن پر خودکش بم دھماکے میں ایک ممتاز صومالی خاتون رُکن پارلیمنٹ ساز سمیت کم از کم 15 افراد ہلاک ہو گئے۔

یہ حملہ بدھ کی شام صومالی کے دارالحکومت بیلڈوینے کے ہیران قصبے میں ہوا۔

متاثرین میں حزب اختلاف کی رکن اسمبلی آمنہ محمد عابدی بھی شامل تھیں، جو حکومت کی ایک کھلے عام تنقید کرنے والی تھیں جو قومی اسمبلی میں اپنی نشست برقرار رکھنے کے لیے لڑ رہی تھیں۔

پولیس نے جمعرات کو بتایا کہ وسطی صومالیہ کے دیہی علاقوں میں ایک پولنگ سٹیشن پر۔

یہ حملہ، بدھ کی شام، صومالی علاقے ہیران کے دارالحکومت بیلڈوینے قصبے میں ہوا۔

متاثرین میں حزب اختلاف کی رُکن اسمبلی آمنہ محمد عابدی بھی شامل تھیں جو حکومت کی سخت ناقد اور قومی اسمبلی میں اپنی نشست برقرار رکھنے کے لیے لڑ رہی تھیں۔

شدت پسند صومالی تحریک الشباب نے حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

پولیس افسر احمد حسن نے ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا کہ مرنے والوں میں زیادہ تر "عام شہری" تھے۔ حملے میں "غیر متعینہ تعداد" شہری زخمی ہوئے۔

ضحکان حسن نامی ایک عینی شاہد نے کہا کہ میں پولنگ سٹیشن کے قریب ہی تھا کہ ایک خودکش حملہ آور رکن پارلیمنٹ آمنہ کی طرف بھاگا، اسے گلے لگا لیا اور خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ فوجیوں نے ہوا میں گولیاں چلائیں، لیکن بدقسمتی سے وہ خاتون رکن پارلیمنٹ کو نہیں بچا سکے۔

امینہ عبدی اس ہفتے ہونے والے ووٹ میں دوبارہ انتخاب کے لیے بیلڈوائن میں مہم چلا رہی تھیں۔

اس تناظر میں نامہ نگار عبدالرزاق محمد نے ایک انٹیلی جنس ملازم کے بارے میں بات کرتے ہوئے جو اس کے قتل کی تحقیقات کرنے کی کوشش کر رہا ہے کہا کہ صومالیہ نے ایک عظیم، ہونہار رہ نما، کارکن، اور نڈر لیڈر کو کھو دیا ہے۔

دوسری طرف ملک کے صدر محمد عبداللہ محمد اور وزیر اعظم محمد حسین روبلی نے اس حملے کی مذمت کی۔

صومالیہ میں پارلیمانی اور صدارتی انتخابات ایک بالواسطہ عمل میں ہو رہے ہیں جس کے دوران قبیلے کے بزرگ پارلیمنٹ کے ایوان زیریں کے 275 اراکین کا انتخاب کرتے ہیں جو غیر متعینہ وقت پر نئے سربراہ مملکت کا انتخاب کرتے ہیں۔

الیکشن کمیشن کے اعداد و شمار بتاتے ہیں کہ 15 اپریل کی پولنگ کی آخری تاریخ سے پہلے اب تک 246 ارکان کا انتخاب کیا جا چکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں