یمن اور حوثی

عرب اتحاد کا صنعاء میں شہریوں کوحوثیوں کے اسلحہ گوداموں سے دوررہنے کا مشورہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

عرب اتحاد نے یمنی شہریوں پرزوردیاہے کہ وہ دارالحکومت صنعاء کی ہدیٰ اسٹریٹ میں ایران کی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کے اسلحہ کے گوداموں سے دور رہیں۔

عرب اتحاد کے مطابق حوثیوں نے ہدیٰ اسٹریٹ میں ہتھیاروں کے گودام بنا رکھے ہیں۔اتحاد نے علاقے کے مکینوں کوحوثی ملیشیا کے دیگرٹھکانوں سے دور رہنے کا بھی مشورہ دیا ہے۔اس نے مزید کہا ہے کہ حوثی جنگجو وہاں کے مکین شہریوں کو انسانی ڈھال کے طورپراستعمال کررہے ہیں۔

اس سے قبل ہفتے کے روزاتحاد نے حوثیوں کوالحدیدہ اور الصلیف کی بندرگاہوں اورصنعاء کے بین الاقوامی ہوائی اڈے سے تمام ہتھیار ہٹانے کے لیے تین گھنٹے کی ڈیڈ لائن دی تھی۔

اس نے واضح کیا تھا کہ صنعاء کے ہوائی اڈے اور دیگر شہری علاقوں میں ہتھیاررکھنے سے ان کی حیثیت ’ختم‘ ہوجائے گی اور اتحاد یہ نہیں چاہتا ہے کہ محفوظ علاقے اس کے حملوں کا نشانہ بنیں۔

جمعہ کو عرب اتحاد نے سعودی عرب میں تیل کی تنصیبات پرحملوں کے جواب میں یمن میں فضائی حملے شروع کرنے کا اعلان کیا تھا اور اس نے الحدیدہ اور الصلیف میں حوثیوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے۔

واضح رہے کہ یمن سے ایران کے حمایت یافتہ حوثیوں نے 2021 اور 2022ء کے دوران میں سعودی عرب پر سرحد پار سے سیکڑوں حملے کیے ہیں۔حوثی ملیشیا بارودی ڈرون، بیلسٹک میزائلوں اوردھماکاخیز مواد سے لدی کشتیوں سے سعودی عرب میں شہری علاقوں اور توانائی کی تنصیبات کو نشانہ بناتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں