روس اور یوکرین

اقوام متحدہ: یوکرین جنگ میں اب تک تین ہزار سے زیادہ شہری ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے دفتر (او ایچ سی ایچ آر) نے بتایا ہے کہ 24 فروری کو روسی فوج کے حملے کے آغاز کے بعد یوکرین میں شہریوں کی ہلاکتوں کی تعداد 3000 سے تجاوز کرگئی ہے۔

دفترنے سوموار کو ایک بیان میں کہا ہے کہ اب تک 3153 افراد کی ہلاکتوں کی تصدیق ہوئی ہے اور جمعہ کے بعد سے 254 ہلاکتیں ہوئی ہیں۔او ایچ سی ایچ آر نے جنگ زدہ علاقوں تک رسائی میں مشکلات اور جاری تصدیقی کوششوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ہلاکتوں کی اصل تعداد اس سے کہیں زیادہ ہوسکتی ہے۔

اس نے کسی فریق کو ان ہلاکتوں کا ذمے دار قرار دیے بغیر کہا کہ زیادہ تر افراد دھماکا خیزہتھیاروں کانشانہ بنے ہیں اور وہ ہلاک یا زخمی ہوئے ہیں۔میزائل حملوں اور فضائی حملوں سے وسیع ترعلاقوں میں تباہی پھیلی ہے۔

روس اپنی اس فوجی کارروائی کو یوکرین کوغیرمسلح کرنے اور اسے فاشسٹوں سے بچانے کے لیے ایک ’’خصوصی آپریشن‘‘قرار دیتا ہے۔یوکرین اورمغرب اس کے اس مؤقف کو بے بنیاد اور بلاجواز قراردیتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں