.
روس اور یوکرین

یورپ میں اپنے سفارت خانے بند کرنے کی کوئی منصوبہ بندی نہیں: روسی نائب وزیر خارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روسی خبر رساں ایجنسی نے آج منگل کے روز نائب وزیر خارجہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ مغرب کی جانب سے غیر دوستانہ اقدامات اور ماسکو پر پابندیوں میں توسیع کے جواب میں روس یورپ میں اپنے سفارت خانے بند کرنے کی منصوبہ بندی نہیں کر رہا ہے۔

روسی نائب وزیر خارجہ الیگزینڈر جروشکو نے بتایا کہ "یہ ہماری روایت نہیں رہی ... لہذا ہم سمجھتے ہیں کہ سفارتی مشن کے دفاتر کا کام کرتے رہنا اہم ہے"۔

یاد رہے کہ پولینڈ میں متعیّن روسی سفیر سرگئی آندریف پر یوم فتح کی 77 ویں سال گرہ کے موقع پر وارسا میں سوویت فوجیوں کے یادگاری قبرستان میں پھول چڑھاتے ہوئے سرخ رنگ سے حملہ کیا گیا۔ روس کی سرکاری خبررساں ایجنسی تاس کی رپورٹ کے مطابق روسی فیڈریشن کے سفیر، ان کی اہلیہ اور ان کے ساتھ آنے والے سفارت کاروں کے ایک گروپ پرسرخ رنگ سے چھڑکاؤ کیا گیا اورانھیں فوجی یادگار پر جانے کی اجازت نہیں دی گئی۔

تاس کے مطابق روسی سفیر جب کار سے اترے توانھیں ایک مشتعل ہجوم نے گھیر لیا۔ یہ لوگ ان کی آمد سے قبل ہی یوکرینی پرچموں اور سرخ رنگ کی چادروں کے ساتھ اس یادگاری مقام پر جمع تھے اور وہ روس کے خلاف نعرے بازی کر رہے تھے۔

واقعے کے بعد ماسکو نے پولینڈ کو "شدید احتجاج" کی یادداشت ارسال کی۔

واضح رہے کہ 9 مئی کو سابق سوویت یونین کی افواج کی نازی جرمنی کے خلاف دوسری عالمی جنگ میں جیت کی خوشی میں یوم فتح منایا جاتا ہے اور روسی عہدے دار اورسفیر فوجی یاد گاروں پر پھول چڑھاتے اور نازی فوجیوں کے خلاف جنگ میں کام آنے والے سوویت فوجیوں کو خراجِ عقیدت پیش کرتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں