اونٹ صنعاء کے زرگر کی دکان میں کیا خریدنے گیا؟ ویڈیو میں دیکھیے!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

عربوں کے خیمے میں اونٹ کے داخلے سے متعلق کہاوت تو سب ہی نے سن رکھی ہو گی، تاہم گذشتہ دنوں اس قدیم کہاوت میں جدید اضافہ اس وقت دیکھنے میں آیا جب ایک اونٹ یمن کے دارلحکومت صنعاء میں زرگر کی دکان میں جا گھسا۔

اس واقعے کی ویڈیو نے سوشل میڈیا پر دھوم مچا رکھی ہے جس میں صحرائی جہاز کو زرگر کی دکان میں داخل ہوتے دیکھا جا سکتا ہے۔ اونٹ کو اس طرح اچانک اندر آتے دیکھ کر دکاندار خوف زدہ ہو گئے اور انہوں اونٹ سے بچنے کے لیے شوکیس کے پیچھے پناہ لی۔ صنعاء قدیمی بازار میں ایک اونٹ کو چاندی کے زیورات اور سلور کے برتوں کی دکان میں گھسنے کی کوشش کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

جیسے ہی اونٹ دکان کی دہلیز پر نظر آیا دکاندار خوف زدہ ہو گیا اور اس نے ایک دوسرے شخص کے ساتھ دکان کے شو کیس کے پیچھے چھپ کر پناہ لی۔ اونٹ نےاندر آنے کی بار بار کوشش کی مگر دکان میں جگہ تنگ ہونے کے باعث وہ مزید اندر داخل نہ ہو سکا۔

جنگ سے متاثر ایک قدیم صنعت

صنعاء میں چاندی کی دکان میں اونٹ کے آنے کی ویڈیو پر سوشل میڈٰیا پر تبصرے کیے جا رہے ہیں۔ اس بازار میں مرجان، سُلیمانی، بالیاں، کڑے، انگوٹھیاں اور جیولری کے سامان کی دیگر دکانیں بھی موجود ہیں۔

ایک شہری نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ دکانداروں کے لیے اونٹ کوئی غیر مانوس جانور نہیں مگر اچانک دیکھ کر شاید انہیں لگا کہ شیر گھس آیا ہے۔ اس لیے وہ بھاگ کھڑے ہوئے۔

کچھ لوگوں نے بتایا کہ رزگر کی دکان میں داخلے کا خواہش مند اونٹ قریب ہی واقع ایک کوہلو سے آیا تھا جہاں اسے تلوں کا تیل نکالنے والے کوہلو میں جوتا گیا تھا۔

کوہلو کے ذریعے تلوں سے تیل کشید کرنا یمن میں ایک روایتی پیشہ ہے جو سیکڑوں برسوں سے وہاں رائج ہے۔ یہ صنعت جنگ کے زمانے میں متاثر ہوئی کیونکہ یہ بہت سے لوگوں کی آمدنی کا ذریعہ اس طرح کے دیسی کوہلو ہیں۔ غیر ملکی سیاحوں کی آمد بند ہونے کے بعد کوہلو کے ذریعے تلوں یا دوسری اجناس کے تیل نکالنے کی صنعت بری طرح متاثر ہوئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں