یمن اور حوثی

امریکایمن کی صورت حال کے بارے میں ’محتاط طور پر پُرامید‘ہے: لینڈرکنگ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکا کے سینیرسفارت کار ٹِم لینڈرکنگ نے کہا ہے کہ ان کا ملک جنگ زدہ یمن میں پائیدارامن کے قیام کے لیے پُرعزم ہے۔

یمن کے لیے امریکا کے خصوصی ایلچی ٹم لینڈرکنگ منگل کو یمنی فریقوں کے درمیان مزید دو ماہ کے لیے جنگ بندی میں توسیع پررضامندی کے چند روز بعد گفتگو کررہے تھے۔انھوں نے کہا کہ امریکا اس صورت حال کے بارے میں محتاط طور پرپُرامید ہے۔

انھوں نے ایک کال میں صحافیوں کوبتایا کہ جنگ بندی ایک مثبت اقدام ہے لیکن ابھی اس ضمن میں مزید کام کی ضرورت ہے۔ہم فریقین سے جنگ اور تباہی پر امن کو ترجیح دینے اور اس کا انتخاب کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔

انھوں نے صنعاء میں امریکی سفارت خانے کے ملازم 13 یمنیوں کو بدستور حراست میں رکھنے پرایران کے حمایت یافتہ حوثیوں کو تنقید کا نشانہ بنایا اوران کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا۔

لینڈرکنگ نے یوایس ایڈ کے ایک ریٹائرڈ ملازم عبدالحمید العجامی کے اہل خانہ سے تعزیت کی۔العجامی رواں سال کے اوائل میں حوثیوں کی حراست ہی میں انتقال کر گئے تھے۔

انھوں نے یہ بھی کہا کہ ایران نے یمنی حوثیوں کو سعودی عرب میں شہریوں پرحملوں کی ترغیب دی ہے۔انھیں مہلک ہتھیارتیارکرنے اور چلانے کی تربیت دی ہے اور اس کے علاوہ ان کی معاونت کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں