سعودی اورامریکی حکام کااقتصادی شراکت داری کوفروغ دینے کے طریقوں پرتبادلہ خیال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب اور امریکا کے حکام نے دونوں ممالک کے درمیان موجودہ اقتصادی شراکت داری کو بہتر بنانے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

سعودی وفدکی قیادت وزیرتجارت ڈاکٹر ماجد بن عبداللہ القصبی نے کی۔ ان کے ساتھ واشنگٹن میں سعودی سفیر شہزادی ریما بنت بندر بن سلطان بھی امریکی کے ساتھ اعلیٰ سطح کے مذاکرات میں شریک تھیں۔

انھوں نے امریکی وزیرتجارت جینارائمونڈو سے ملاقات کی اور ان سے سبزمعیشت کی تعمیروترقی، کاروبار میں خواتین کے کردار کو مستحکم کرنے، چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروباری اداروں (ایس ایم ایز) کی ترقی اور جدت طرازی کو فروغ دینے پر تبادلہ خیال کیا۔

ایس پی اے کی رپورٹ کے مطابق زیربحث دیگر موضوعات میں ہائیڈروجن کی پیداوار، فضلات کا انتظام، حقوق دانش کے تحفظ کے ذریعے اختراعات کو فروغ دینا، مصنوعی ذہانت پر مبنی علم کی معیشت میں اضافہ، کلاؤڈ اسٹوریج، ڈیٹا فلو، ایس ایم ایزکی ترقی اور معاشی ترقی کے عمل میں خواتین کا کردار اور ان کی شرکت شامل تھے۔

ڈاکٹر ماجدالقصبی نے امریکا کی جارج ٹاؤن یونیورسٹی میں منعقدہ ایک تقریب میں دوطرفہ تعاون کے مواقع پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

ایس پی اے کے مطابق سعودی وزیر نے ایکسپورٹ امپورٹ بینک آف دی امریکا (ایگزم) کی صدرریٹا جولیوس سے ’’سعودی امریکااقتصادی شراکت داری بڑھانے کے ذرائع‘‘پربھی بات چیت کی ہے۔

وزیرتجارت نے یہ ملاقاتیں جولائی میں شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی دعوت پرامریکی صدر جو بائیڈن کے دورۂ سعودی عرب سے قبل کی ہیں۔گذشتہ سال جولائی میں صدارتی منصب سنبھالنے کے بعد ان کا سعودی عرب کا یہ پہلا دورہ ہوگا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں