صدر جوبائیڈن کی اہلیہ اور بیٹی سمیت 25 امریکیوں کے روس میں داخلے پرپابندی عاید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

روس نے امریکی صدر جو بائیڈن کی اہلیہ اور ان کی بیٹی پر ملک میں داخلے پرعاید کردی ہے۔ ان کے ساتھ 23 دیگر امریکیوں پر بھی روس نے یہی پابندی عاید کی ہے۔

روسی وزارت خارجہ نے منگل کے روز بتایا کہ روس کی سیاسی اور عوامی شخصیات کے خلاف مسلسل بڑھتی ہوئی امریکی پابندیوں کے رد عمل کے طور پر 25 امریکی شہریوں کو’اسٹاپ لسٹ‘ میں شامل کیا گیا ہے۔

اس فہرست میں ریاست مین سے تعلق رکھنے والی سوسن کولنز، کینٹکی کے مچ میک کونل، آئیووا کے چارلس گراسلی، نیویارک کے کرسٹن گلیبرانڈ سمیت کئی امریکی سینیٹرز بھی شامل ہیں۔

روس کی نئی پابندیوں کی زد میں آنے والوں میں امریکی جامعات کے متعدد پروفیسر ،محققین اور سابق امریکی عہدے دار بھی شامل ہیں۔

روس نے قبل ازیں 21 مئی کو کہا تھا کہ اس 963 امریکیوں کے ملک میں داخلے پر پابندی عاید کردی ہے۔ان میں صدر جو بائیڈن اور دیگراعلیٰ حکام بھی شامل تھے۔اس نے’’امریکا کےمعاندانہ اقدامات‘‘ کے جواب میں کارروائی جاری رکھنے کا اعلان کیا تھا۔

امریکا اوراس کے مغربی اتحادیوں نے 24 فروری کو یوکرین پر حملے کے ردعمل میں روس کے خلاف سخت پابندیاں عاید کی ہیں اور یوکرین کو ہتھیارمہیا کرنے کے عمل میں اضافہ کردیا ہے۔روس اس کے جواب میں امریکا اور اس کے اتحادی ممالک پرمختلف پابندیاں عاید کررہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں