.

ناکارہ گردے کی جگہ تندرست گردہ نکالنے والا ڈاکٹر ریمانڈ پر پولیس کے حوالے

اردنی ڈاکٹر کی مجرمانہ غفلت پر عوام میں شدید غم وغصہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اُردن میں حکام نے ایک ڈاکٹر کے ہاتھوں ایک مریضہ کے ناکارہ گردے کی جگہ اس کا تندرست گردہ نکالنے کے واقعے کی تحقیقات شروع کی ہیں۔

میڈیا سے معلوم ہونے والی خبروں سے پتا چلا ہےکہ اردن کی ایک خاتون گردے کے مرض میں مبتلا تھی اور اس کا ایک گردہ صرف دس فی صد ہی کام کررہا تھا۔ ایٹروفی کی وجہ سے اس گردے کو نکالنا تھا۔ مریضہ نے ڈاکٹر سے رجوع کیا۔ ’نیم حکیم‘ معالج نے مریضہ کے خراب گردے کی جگہ اس کا صحت مند گردہ ہی نکال ڈالا۔

یہ واقعہ عمان میں واقع الزرقا سرکاری اسپتال میں پیش آیا۔ حکام کو اس بارے میں علم ہونے پر غفلت برتنے والے ڈاکٹر کو برطرف کرکے اس کے خلاف قانونی کارروائی شروع کردی گئی ہے۔

مریضہ کے خاندان کا موقف

مریضہ کے والدین ابھی تک صدمے میں ہیں کہ ان کی بیٹی کے ساتھ کیا ہوا۔ طبی عارضے کا شکار ہونے والے خاتون کے بھائی خالد الحیوات نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو بتایا کہ ان کی بہن کو دو ماہ سے بھی زیادہ عرصہ قبل گردے میں تکلیف ہوئی جس پر چیک اپ کے لیے زرقا سرکاری اسپتال گئیں جہاں پتہ چلا کہ اس کا ایک گردہ ایٹروفی کا شکار ہے۔اس کے کام کرنے کی صلاحیت صرف دس فی صد رہ گئی ہے، اس لیے ڈاکٹروں نے اسے نکالنے کا فیصلہ کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پیر کے روز اس کا آپریشن کرنے والے ڈاکٹر نے طبی غلطی کے ساتھ اس کا صحت مند گردہ نکال دیا، جس کی وجہ سے ان کی بہن کو انتہائی نگہداشت میں داخل کرنا پڑا۔

مریض کے بھائی نے اردن کے وزیر صحت ڈاکٹر فراس الھواری کو اس واقعے کا ذمہ دار ٹھہرایا اور ان سے اپنی بہن کے لیے گردہ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا۔

قانونی کارروائی

زرقا کے پبلک پراسیکیوٹر کے جج ایمن المصلحہ نے گردے کے غلط آپریشن کرنے والے ڈاکٹر کو گرفتار کرنے کے بعد چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا ہے۔

صلحہ نے مقدمے کے مرکزی ملزم ڈاکٹر کو ایک عضو کاٹنے اور نکالنے کا جرم قرار دیا۔ دوسرے دو ڈاکٹروں کو اس کیس میں ملوث نہ ہونے پر چھوڑ دیا گیا ہے۔

ایک طبی ذریعے کے مطابق سرجری کی نگرانی کرنے والے ڈاکٹروں نے آپریشن کے ایک گھنٹے بعد ان کی طبی غلطی کا پتہ چلا، جس میں بتایا گیا کہ مریضہ کی عمومی حالت تشویشناک ہے کیونکہ وہ ایک گردہ کے ساتھ زندہ ہے، جو کہ خراب ہےحالاکہ اسی گردے کونکالنے کا طے کیا گیا تھا۔

خاتون کے ساتھ پیش آنے والے واقعے کا سن کرشہریوں اور اس کے اقارب کی بڑی تعداد اسپتال کے باہر جمع ہوگئی تھی مگر پولیس کی جانب سے تحقیقات شروع کیے جانے پرلوگ منتشر ہوگئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں