.

روسی ہائپرسونک لیب کا سربراہ غداری کے الزام میں گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روس کی سرکاری نیوز ایجنسی’ٹاس‘ نے جمعہ کو رپورٹ کیا ہے کہ ایک سرکردہ روسی ہائپرسونک ماہر کو غداری کے شبہ میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔

انسٹی ٹیوٹ کی ویب سائٹ کے مطابق آندرے شپلیوک نووسیبرسک انسٹی ٹیوٹ آف تھیوریٹیکل اینڈ اپلائیڈ میکینکس میں ہائپرسونک لیبارٹری کے سربراہ ہیں اور حالیہ برسوں میں ہائپرسونک میزائل سسٹم کی ترقی میں معاونت کے لیے مربوط تحقیق کر چکے ہیں۔

نیوز ایجنسی ’ٹی اے ایس ایس‘ نے شپلیوک کے ساتھیوں میں سے ایک کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انسٹی ٹیوٹ میں تلاشی کے دوران انہیں حراست میں لیا گیا۔

پچھلے مہینے نووسیبرسک میں مقیم ایک اور طبیعیات دان دمتری کولکر غداری کے شبہ میں گرفتار ہونے کے فوراً بعد لبلبے کے کینسر سے انتقال کر گئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں