کامن ویلتھ گیمز میں شریک 2 پاکستانی باکسر برمنگھم میں لاپتا

پاکستان باکسنگ فیڈریشن کے مطابق باکسر سلیمان بلوچ اور نذیراللہ آخری دو گھنٹوں میں غائب ہوگئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

دولت مشترکہ گیمز میں پاکستانی اسکواڈ کا حصہ دو قومی باکسر گیمز کے اختتام کے بعد برطانیہ میں لاپتا ہو گئے۔

پاکستان باکسنگ فیڈریشن نے 2 پاکستانی باکسروں کے اچانک غائب ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں باکسر برمنگھم میں غائب ہو گئے ہیں اور فیڈریشن ان کو تلاش کر رہی ہے۔

پاکستان باکسنگ فیڈریشن کے مطابق 63 کے جی کے سلیمان بلوچ اور لائٹ ہیوی ویٹ باکسر نذیراللہ گیمز کے بعد اچانک غائب ہو گئے ہیں جبکہ دونوں باکسروں کے سفری دستاویزات باکسنگ فیڈریشن کے حکام کے پاس ہیں۔

سیکریٹری پاکستان باکسنگ فیڈریشن ناصر ٹنگ نے بتایا کہ دونوں باکسر آخری دو گھنٹوں میں لاپتا ہوئے ہیں تاہم ایس او پیز کے تحت تمام سفری دستاویزات ضبط کرلی گئی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ برطانوی حکومت اور پولیس کو اس حوالے سے آگاہ کر دیا گیا ہے اور دونوں باکسروں کا جلد پتا لگائیں گے۔ پاکستان اولمپک ایسوس ایشن (پی او اے) نے معاملے کی تحقیقات کے لیے 4 رکنی کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔

خیال رہے برطانیہ کے شہر برمنگھم میں منعقدہ 12 روزہ کامن ویلتھ گیمز میں پاکستان نے 2 طلائی تمغے جیتے، ویٹ لفٹنگ میں نوح دستگیر بٹ اور جیولن تھرو میں ارشد ندیم نے گولڈ میڈل حاصل کیے، اس کے علاوہ قومی ایتھلیٹس نے 3 چاندی اور 3 کانسی کے تمغے بھی حاصل کیے۔

اختتامی تقریب میں کامن ویلتھ گیمز 2026 کی میزبانی باضابطہ طور پر آسٹریلیا کی ریاست وکٹوریہ کے حوالے کر دی گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں