سعودی شاہ سلمان کا سوڈان میں سیلاب سے متاثرہ افراد کو فوری امداد بھیجنے کا حکم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب کے شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے سوڈان میں تباہ کن سیلاب سے متاثرہ افراد کی مدد کے لیے فوری طورپرخوراک کا سامان اور خیمے بھیجنے کا حکم دیا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق خادم الحرمین الشریفین نے شاہ سلمان انسانی امداد اور ریلیف مرکز کومملکت سے سعودی عرب تک ایک امدادی فضائی پل بنانے کی ہدایت کی ہے۔اس کے تحت سوڈان میں سیلاب سے متاثرہ افراد کوخوراک مہیا کی جائے گی اور بے گھر ہونے والے افراد کے لیے امدادی خیمے بھیجے جائیں گے۔

شاہی دیوان کے مشیراورشاہ سلمان انسانی امداد اور ریلیف مرکز کے نگران اعلیٰ ڈاکٹرعبداللہ بن عبدالعزیز الربیعہ کے حوالے سے ایس پی اے نے کہا کہ یہ حکم اس حمایت کاتسلسل اور مدد کی توسیع ہے جو شاہ سلمان کی حکومت اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان مختلف حالات اورآزمائشوں کے دوران میں تمام برادر اور دوست ممالک کے ساتھ کھڑے ہونے کے لیے مہیا کرتے ہیں۔

ڈاکٹر الربیعہ نے مزید کہا کہ یہ شاہی فرمان سعودی قیادت اورعوام کے سوڈانی عوام کے ساتھ مضبوط برادرانہ تعلقات کی بھی عکاسی کرتا ہے۔

سوڈان میں موسمی بارشوں اور سیلاب کے نتیجے میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی ہے اوراب تک ملک کے مختلف حصوں میں سیلاب کے نتیجے میں 80 سے زیادہ افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔سوڈانی حکومت نے سیلاب کی صورت حال کے پیش نظر چھے ریاستوں میں ہنگامی حالت کے نفاذ کا اعلان کیا ہے۔

سوڈان میں بارشوں کا موسم عام طور پرجون میں شروع ہوتا ہے اور ستمبر کے آخر تک رہتا ہے ۔اگست اور ستمبرمیں زیادہ بارشیں ہوتی ہیں جن کے نتیجے میں سیلابی ریلے ملک کے مختلف علاقوں میں تباہی کا سبب بنتے ہیں۔

العربیہ کی ایک رپورٹ کے مطابق اب تک سیلاب سے 17,080 گھر مکمل تباہ ہوچکے ہیں جبکہ 23,850 کوجزوی نقصان پہنچا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں