امریکی اور اسرائیلی عہدیداروں کا ایرانی پراکسیوں کے خطرات پر تبادلہ خیال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ اسرائیلی وزیر دفاع بینی گینٹز کو امریکی قومی سلامتی کے مشیر جیک سلیوان سے ملاقات کے دوران یہ بتایا گیا ہے کہ جو بائیڈن انتظامیہ 2015 کے جوہری معاہدے کو بحال کرنے کے لیے مذاکرات کے متوازی طور پر ایران کے خلاف فوجی آپشن تیار کر رہی ہے۔

جب سے بائیڈن نے عہدہ سنبھالا ہے ایران کے ساتھ جوہری معاہدے کی بحالی کے لیے بات چیت دوبارہ شروع ہوگئی ہے۔ اسرائیل امریکا سے ایران کے خلاف ایک قابل اعتماد فوجی دھمکی کے لیے کہہ رہا ہے کیونکہ تہران کی طرف سے مزید لچک دکھانے کا واحد راستہ یہی ہے۔

جمعے کے روز بینی گینٹز نے سلیوان سے وائٹ ہاؤس میں ایک گھنٹے سے زائد وقت کی ملاقات کی۔ اس ملاقات میں ان کے ساتھ 2015 کے جوہری معاہدے میں واپسی اور ایران کی تخریبی علاقائی سرگرمیوں پر ممکنہ معاہدے پر تبادلہ خیال کیا۔

گینٹز فلوریڈا میں امریکی سینٹرل کمانڈ کے ہیڈ کوارٹر میں بات چیت کے ایک دن بعد واشنگٹن پہنچے، جس میں اسرائیلی اہلکار کے مطابق، خطے میں ایران کی سرگرمیوں کا مقابلہ کرنے پر بھی توجہ مرکوز کی گئی۔

وائٹ ہاؤس نے کہا ہے کہ سلیوان اور گینٹز نے واشنگٹن میں امریکا کے اس عزم کو یقینی بنانے کے بارے میں بات کی کہ ایران جوہری ہتھیار حاصل نہ کرے۔ وائٹ ہاؤس نے ایک بیان میں مزید کہا کہ سلیوان اور گینٹز نے خطے میں ایران اور اس کے پراکسیوں کی طرف سے خطرات کا مقابلہ کرنے کی ضرورت پر تبادلہ خیال کیا۔

بینی گینٹز نے سلیوان کے ساتھ ملاقات کے بعد کہا کہ انہوں نے سلیوان کے ساتھ جوہری معاہدے کی بحالی پر تبادلہ خیال کیا۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیل موجودہ متن کے ساتھ معاہدے کو قبول نہیں کرے گا۔

گینٹز نے میٹنگ کے دوران تہران کو جوہری ہتھیاروں کے حصول سے روکنے کے لیے اہم عناصر کی فراہمی کی ضرورت کو بھی واضح کیا اور ایرانی جوہری منصوبے کے خلاف جارحانہ اور دفاعی آپریشنل صلاحیتوں کو بڑھانے کی ضرورت پر زور دیا۔

درایں اثنا ایک اسرائیلی اہلکار نے کہا کہ گینٹز نے سلیوان کو بتایا کہ اسرائیل ایران کے ساتھ نئے جوہری معاہدے کی مخالفت کرتا ہے۔ انہوں نے ایران کے خلاف قابل اعتماد امریکی فوجی دھمکی کی ضرورت پر زور دیا۔ گینٹز نے سلیوان کو یقین دلایا کہ اسرائیل ایران کے خلاف کارروائی کرنے کی اپنی آزادی برقرار رکھے گا۔

ایران کے ساتھ جوہری مذاکرات کے ایک سیشن کا منظر۔
ایران کے ساتھ جوہری مذاکرات کے ایک سیشن کا منظر۔
مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں