یونیسف نے ایتھوپیا کے کنڈر گارڈن پر فضائی حملہ کی مذمت کر دی

حملہ میں دو بچوں سمیت چار افراد جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بچوں سے متعلق اقوام متحدہ کے ادارے یونیسف نے ایتھوپیا میں کنڈر گارٹن پر کیے گئے فضائی حملے کی مذمت کی ہے۔ ایتھوپیا کے ٹائیگرے ریجن میں کیے گئے فضائی حملے سے دو بچوں سمیت چار افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔

جمعہ کے روز ہونے والے ٹائیگرے دارالحکومت میں اس فضائی حملے سے محض چند دن پہلے اسی ریجن کے سرحدی علاقے میں حکومت کا اس کے مخالف متحارب گروپ کے درمیان تصادم ہوا تھا۔ یہ تصادم پانچ ماہ کی جگ بندی کے خاتمے کے فوری بعد ہوا تھا۔ یونیسف نے فضائی حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ کنڈر گارٹن کے متعدد بچے اس بمباری سے زخمی یا جاں بحق ہو گئے تھے۔

یونیسف کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر کیتھرائین رسل نے اس مذمت ک اظہار اپنے ایک ٹویٹ کے ذریعے کیا ہے۔ واضح رہے ٹائیگرے پیپلز لبریشن فرنٹ کا ملک کے شمالی علاقے پر کنٹرول ہے۔ اس گروپ کی طرف سے کہا گیا ہے کہ فضائی حملے کنڈر گارٹن کی عمارت منہدم ہو گئی جبکہ قریبی رہائشی علاقہ متاثر ہوا ہے۔

عدیس ابابا کی وفاقی حکومت کا کہنا ہے کہ کنڈر گارڈن ہمارا ہدف نہیں تھا بلکہ ہم ٹائیگرے پیپلز لبریشن فرنٹ کو نشانہ بنانا چاہتے تھے۔ مقامی ہسپتال کے کلینیکل ڈائریکٹر نے تصدیق کی ہے کہ فضائی حملہ میں چار افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں