سعودی عرب کی شوریٰ کونسل کے وفد کا یواے ای کا دورہ،حکام سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی شوریٰ کونسل کے وفد نے اتوار کے روز متحدہ عرب امارات کا سرکاری دورہ شروع کیا ہے۔

شوریٰ کونسل کے اسپیکر شیخ ڈاکٹرعبداللہ بن محمد آل شیخ سعودی وفد کی قیادت کررہے ہیں۔وفد میں کونسل کے ارکان میجر جنرل علی بن محمد العسیری، میجر جنرل سمیع بن زید الحزمی اور ڈاکٹرعبداللہ بن عمر النجار شامل ہیں۔ڈاکٹرعبداللہ بعد میں دعوت پر وفاقی قومی کونسل کے اسپیکر سقرغوباش سے بات چیت کریں گے۔

دونوں فریق دونوں کونسلوں کے درمیان پارلیمانی تعلقات پر تبادلہ خیال کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔دونوں کونسلیں اپنے اپنے ممالک کی حکومتوں کے مشاورتی اداروں کے طور پر کام کرتی ہیں۔

آل شیخ نے متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے درمیان تعلقات کی مضبوطی کا ذکر کیا اور سعودی اماراتی رابطہ کونسل کے کام پر روشنی ڈالی۔سعودی عرب کے شاہ سلمان بن عبدالعزیزنے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے 150 ماہرین کا بہ طور ارکان کا انتخاب کیا ہے۔

کونسل کو نئے قوانین تجویز کرنے کا اختیار حاصل ہے۔ان پرپھرشاہ کی طرف سے حتمی منظوری کے لیے غورکیا جاتا ہے۔سعودی شاہ نے 2013ءمیں ایک فرمان جاری کیا تھا۔اس میں کہا گیا تھا کہ کونسل کی 20 فی صد ارکان خواتین ہونی چاہییں۔

متحدہ عرب امارات کی فیڈرل نیشنل کونسل 40 ارکان پر مشتمل ہے۔ان میں سے نصف خواتین ارکان ہوتی ہیں۔ایف این سی کے نصف ارکان کا انتخاب اماراتی شہری کرتے ہیں جبکہ باقی نصف کا انتخاب مختلف امارات کے حکمران کرتے ہیں۔

ایف این سی کو مسودہ قوانین منظور کرنے اور امارات کے شاہی خاندانوں کو تجاویز دینے کا اختیار حاصل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں