یہودیوں اور پاکستانیوں کے متعلق ’توہین آمیز‘ ٹویٹ پر برطانوی پولیس افسر معطل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ماضی میں نسل پرستی پر مبنی ٹویٹ کرنے اور شام میں مشتبہ شدت پسند خاتون کے ساتھ مسلسل رابطے میں رہنے والی برطانوی پولیس کی خاتون افسر کو بالآخر معطل کر دیا گیا ہے۔ برطانوی اخبار دا ڈیلی میل کی جانب سے معاملہ سامنے کے ایک سال بعد ان کے خلاف کارروائی کی گئی۔

اخبار دا ڈیلی میل کے مطابق دو سال پہلے 27 سالہ روبی بیگم کی ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں انہیں حجاب میں دیکھا جا سکتا ہے۔ اس موقعے پر انہوں نے کرونا وائرس کی وجہ سے کیے جانے والے لاک ڈاؤن کے خلاف مظاہرہ کرنے والوں کا بہادری کے ساتھ مقابلہ کیا اور دوسروں کے لیے مثال بن گئیں۔

دوسری جانب 2016 میں میٹروپولیٹن میں بھرتی ہونے سے کئی ماہ پہلے انہوں نے سوشل میڈیا پلیٹ فارم ٹوئٹر کا استعمال کرتے ہوئے یہودیوں کی توہین کی اور نائن الیون کے حملوں کا مذاق اڑایا۔

وہ غیر مسلموں کے بارے میں بات کرتے ہوئے اکثر’کفار‘کی جارحانہ اصطلاح استعمال کرتی تھیں۔ انہوں نے 2014 میں لکھا کہ’میرے مگ پر ہر طرف کفار کے ہونٹ لگے ہوئے ہیں۔ اسے دوبارہ استعمال کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔‘

ایک اور موقعے پر انہوں نے پاکستانیوں کے لیے بھی توہین آمیز لفظ استعمال کیا۔ اخبار کی جانب سے خبردار کیے جانے کے بعد پولیس نے معاملہ آزاد پولیس افسر کو بھیج دیا جس کے بعد بیگم کی ڈیوٹی محدود کر دی گئی۔

تحقیقات کے بعد پولیس نے کہا کہ ان کے خلاف’سنگین بدانتظامی کا جواب دینے کا مقدمہ‘ہے۔ اب ان کے خلاف مقدمے کی سماعت ہونی جس کی تاریخ کا تعین باقی ہے۔ انہیں نو اگست 2022 کو معطل کیا گیا۔

بیگم کئی ماہ تک ایسی خاتون سے رابطے میں رہیں جنہوں نے 2014 میں یورپ سے فرار ہو کرشام میں داعش کی نام نہاد خلافت میں رہنا شروع کر دیا تھا۔ مذکورہ خاتون بعد میں مرد دہشت گردوں کی طرف سے اقلیتی گروپ یزیدیوں کو جنسی غلاموں کے طور پر استعمال کرنے کا دفاع کرنے پر بدنام ہوئیں۔

اس موقعے پر بیگم نے کوئی وضاحت کیے بغیر لکھا کہ ان کا اپنا پاسپورٹ ایک ماہ کے لیے ضبط کر لیا گیا ہے۔

بیگم 2012 سے روبی بیز کے نام سے ٹوئٹر اکاؤنٹ استعمال کر رہی تھیں۔ ان کے زیادہ تر یہودی مخالف تبصرے 2014 میں کیے گئے جب اسرائیل نے غزہ کی پٹی میں فلسطینی عسکریت پسند گروپ حماس پر حملہ کیا۔ انہوں نے ٹویٹ کی کہ’گندے یہودی۔ جہنم انتظار کر رہی ہے۔‘ ایک ٹویٹ میں ان کا کہنا تھا کہ ’اسرائیل کی کوئی حد نہیں۔‘

ایسی کوئی بات سامنے نہیں آئی کہ بیگم نے داعش میں شامل ہونے یا شام جانے کی کوشش کی ہو۔ ان کی بعض ٹویٹس سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ اس گروپ کے رویے سے خوفزدہ تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں