برلن ویک کے دوران سعودی آرٹسٹوں کے فن پاروں کی نمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودہ عرب کے مسک آرٹ انسٹی ٹیوٹ برلن آرٹ انسٹی ٹیوٹ کے تعاون سےجرمنی کے دارالحکومت برلن میں، نیو اسکول آف فوٹوگرافی کی نمائش میں شریک ہے۔ اس نمائش میں ہونہار سعودی آرٹسٹوں کی بڑی تعداد بھی شرکت کر رہی ہے۔

سعودی آرٹسٹ مختلف موضوعات پر ممتاز فن پارے پیش کررہے ہیں۔ یہ نمائش 14 ستمبر سے جاری ہے جو 14 اکتوبر 2022 تک برلن آرٹ ویک کی سرگرمیوں کا حصہ رہے گی۔

اس نمائش میں عصری آرٹ کے مسائل میں دلچسپی رکھنے والے سعودی فنکاروں کی نئی نسل کے تخلیق کردہ متعدد فن پارے اور پروجیکٹس پیش کیے گئے ہیں، جو 2021 میں شروع کیے گئے مسک آرٹ انسٹی ٹیوٹ اور برلن آرٹ انسٹی ٹیوٹ کے درمیان تعاون کے پہلے نتائج کی نمائندگی کرتے ہیں۔

آرٹسٹوں کو ایسے کام پیش کرنے میں دلچسپی تھی جو ماحولیات، ٹیکنالوجی، عزمیت، یادداشت کو نیویگیٹ کرنے اور شہری جگہوں کا سامنا کرنے کے مسائل پر ان کے اثر و رسوخ کو مجسم کرتے ہیں۔اس نوعیت کے کام کو برلن آرٹ انسٹی ٹیوٹ اہمیت دیتا ہے۔

نمائش میں سعودی عرب کے نو آرٹسٹ عبدالمحسن آل بن علی، عبیر سلطان، بشایر ھوساوی، فاطمہ عبدالہادی، ھنا الملی، سارہ خالد، یوسف المانع، زیاد کعکی اور ندا الترکی حصہ لے رہے ہیں۔ جمعرات 15 ستمبر کو نمائش کے تناظر میں ایک پینل ڈسکشن کا انعقاد کیا گیا جس میں فنکار مسک آرٹ انسٹی ٹیوٹ کے ساتھ اپنے مختلف تجربات اور ثقافتوں کے درمیان ایک پل کے طور پر آرٹ کے کردار پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

مسک آرٹ انسٹی ٹیوٹ 16 ستمبر بروز جمعہ کو زائرین کو سعودی ماحول میں عود موسیقی اور عربی کافی کے ساتھ شرکت کرنے والے فنکاروں سے گفتگو کرنے کا موقع بھی فراہم کرے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں