شام میں عالمی اتحاد کے اڈے ’’ گرین ولیج‘‘ پر 3 میزائل برسائے: امریکی فوج

امریکی فوج کی شمال مشرقی شام میں موجود اڈے کو نشانہ بنانے میں ناکامی کااعتراف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی فوج نے پیر کے روز تصدیق کی ہے کہ اس نے شمال مشرقی شام میں ایک اڈے ’’ گرین ولیج‘‘کو 3 میزائلوں سے نشانہ بنایا ہے۔ امریکی فوج نے اعتراف کیا کہ عالمی اتحاد کے ایک اڈے پر یہ میزائل حملہ ناکام رہا۔

خیال رہے بدھ کے روز اقوام متحدہ نے اپنی رپورٹ میں خبردار کیا تھا کہ شام میں کئی نئے جنگی محاذ کھل گئے ہیں اور شام ایک مرتبہ پھر خونریز تنازع کی جانب بڑھ رہا ہے۔

شام میں تباہی کے اثرات

اقوام متحدہ کی تحقیقاتی کمیشن برائے شام کے سربراہ پاؤلو سرجیو پنہیرو نے کہا کہ شام بڑے پیمانے پر لڑائی میں واپس آنے کا متحمل نہیں ہو سکتا لیکن وہ اسی جانب جا رہا ہے۔

جنیوا میں نامہ نگاروں سے گفتگو میں پنہیرو نے کہا کہ ایک موقع پر ہم سمجھ رہے تھے کہ شام میں جنگ مکمل طور پر ختم ہو چکی لیکن اس رپورٹ میں درج خلاف ورزیوں نے برعکس صورتحال واضح کردی۔

50 صفحات پر مشتمل رپورٹ میں یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ حالیہ برسوں میں کئی جنگی محاذوں پر خاموشی طاری رہی ، لیکن اس سب کے باوجود گزشتہ 6 ماہ کے دوران شام میں بنیادی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں میں اضافہ ہوا ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ شمال مشرقی اور شمال مغربی شام میں دوبارہ لڑائی شروع ہوگئی ہے جس کے نتیجے میں کئی شہریوں کی اموات کے ساتھ وہاں خوراک اورپانی کی ترسیل بھی محدود ہوگئی ہے۔

کمیٹی کے رکن ہانی میگلی نے کہا کہ انہوں نے گزشتہ تین ماہ کے دوران بالخصوص یہ بات نوٹ کی ہے کہ روسی جنگجوؤں نے حزب اختلاف کے زیر کنٹرول علاقوں پر حملوں میں اضافہ کردیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق حکومت کے زیر کنٹرول علاقوں میں اپوزیشن کے سابق رہنماؤں کا قتل، کئی گھروں پر چھاپے، حراستی مراکز میں تشدد اور ناروا سلوک بھی کیا جاتا رہا۔

کمیشن نے 2022 کے پہلے چھ مہینوں میں شام بھر میں 12 سے زیادہ اسرائیلی حملوں کی نشاندہی بھی کی۔ ان حملوں میں دمشق ایئرپورٹ پر حملہ بھی شامل ہے۔ اس حملے کے بعد ایئرپورٹ آپریشن دو ہفتے تک معطل رہا تھا۔

اقوام متحدہ نے کہا دمشق ایئرپورٹ پر فلائٹ آپریشن معطل ہونے سےعالمی ادارہ اس عرصہ میں شام کو انسانی امداد بھیجنے سے بھی قاصر رہا۔

خیال رہے 2011 میں شامی صدر کے خلاف مظاہرے خانہ جنگی میں تبدیل ہوگئے تھے اور اس کے بعد سے اب تک ملک میں لاکھوں لوگ جاں بحق اور دسیوں لاکھ افراد بے گھر ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں