میگھن مارکل نرگسیت پسند اور ملازمین پرچیختی چلاتی تھیں: نئی کتاب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانیہ کے شاہی خاندان سے کنارہ کشی کرکے امریکا چلے جانے والے شہزادہ ہیری اور ان کی اہلیہ میگھن مارکل کے متعلق ان کی ایک معاون نےدھماکا خیز انکشافات کیے ہیں۔

یہ انکشافات نئی کتاب ’’ کوٹیرز: دی ہڈن پاور بی ہائینڈ دی کراؤن‘‘ میں کیے گئے۔جوڑے کی نجی سیکرٹری سمانتھا کوہن نے اپنی اس کتاب میں دعویٰ کیا ہے کہ دونوں بہت سخت اور بہت چیخنے چلانے والے تھے۔

نیو یارک پوسٹ کے مطابق ’’حاشیہ بردار: تاج کے پیچھے چھپی طاقت‘‘ نامی کتاب میں سمانتھا نے لکھا کہ ہیری اور مارکل آسٹریلیا کے سفر سے قبل اور سفر کے دوران میں ان پربہت چیخے چلائے تھے۔

واضح رہے کتاب ’’ویلنٹائن‘‘ کے مصنف لو بھی کہ چکے ہیں کہ سمانتھا ہمیشہ کہتی تھی کہ ان کا کام لڑکے لڑکیوں کے ساتھ کام کرنے جیسا ہے۔

کتاب کے مطابق میگھن مارکل ملازمین پر چلاتی تھیں۔ وہ اپنے ملازمین سے غنڈہ گردی بھی دکھاتی تھیں اور یہ شکایت کی تھی کہ انھیں شاہی دوروں پر لوگوں سے مصافحہ کرنے کا کوئی بدلہ نہیں ملا۔

میگھن نے اپنے ملازمین کو روتے اور لرزتے ہوئے چھوڑ دیا تھا۔ اس رویہ پر ملازمین نے انھیں نرگسیت پسند قرار دیا تھا۔

ذرائع نے انکشاف کیا کہ ہیری اور مارکل کے ساتھ کام کرنے والی ٹیم نے ان دونوں کے نامناسب رویہ کی بنا پر خود کو ’’سوسیکس سروائیورز کلب‘‘ کا نام دے دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں