یواے ای:اسکولوں،مالوں میں کووِڈ-19قوانین میں نرمی،ماسک کی پابندی ختم کرنے کافیصلہ

کرونا وائرس کے یومیہ کیسوں کی تعداد اب حکومت کی طرف سے شائع نہیں کی جائے گی:این سیما

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

متحدہ عرب امارات کے اسکولوں کے طلبہ اور اساتذہ کے لیے اب ملک میں نافذ کووِڈ-19 کے حفاظتی پروٹوکول میں نرمی کی گئی ہے اور اب انھیں چہرے پرماسک پہننے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

متحدہ عرب امارات کی نیشنل ایمرجنسی کرائسز اینڈ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این سی ای ایم اے) نے ٹیلی ویژن پر نشر ہونے والی بریفنگ میں اعلان کیا کہ رہائشیوں کو اب تعلیمی اداروں کے ساتھ ساتھ مالز ، سپرمارکیٹوں ، ہوٹلوں اور ریستورانوں میں چہرے کو ڈھانپنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

نئے ضوابط کے مطابق بدھ 28 ستمبر سے صرف عبادت گاہوں، اسپتالوں اور پبلک ٹرانسپورٹ میں ماسک پہننے کی ضرورت ہوگی۔عوامی مقامات کے اندرون میں ماسک کا استعمال عالمی وبائی مرض کے پھیلنے کے بعد سے ڈھائی سال سے نافذالعمل ہے۔

اس وبائی مرض کے آغاز سے لے کر اب تک متحدہ عرب امارات میں 10 لاکھ سے زیادہ کیسز اور 2343 اموات ریکارڈ کی گئی ہیں۔ تاہم متحدہ عرب امارات بھر میں کیسز میں مسلسل کمی آرہی ہے اور یہ 300 سے 400 نئے کیسز کی یومیہ سطح پرآگئے ہیں۔

ابوظبی کے محکمہ تعلیم وتعلم نے تصدیق کی ہے کہ وہ نئی ہدایات پر عمل کرے گا۔دبئی میں نجی اسکولوں، ابتدائی بچپن کے مراکز، جامعات اور تربیتی اداروں میں چہرے پرماسک پہننا اب لازمی نہیں رہا ہے۔ امارت کے نجی تعلیمی ریگولیٹر، نالج اینڈ ہیومن ڈیولپمنٹ اتھارٹی (کے ایچ ڈی اے) نے ٹویٹ کیا کہ مسکراہٹیں لازمی ہیں۔

سوئس انٹرنیشنل اسکول دبئی کی سی ای او اور پرنسپل روتھ برک نے نئی ہدایات کا خیرمقدم کیا ہے۔انھوں نے کہا کہ’’ہم اندرون عمارت سرگرمیوں میں ماسک پہننا آسان بنانے کے لیے اماراتی حکومت کے منصوبوں کے ساتھ مکمل طور پروابستہ ہیں، اور اسکول میں اختیاری ماسک پہننے کے خیال کی حمایت کرتے ہیں‘‘۔

انھوں نے مزید کہا کہ اگرچہ ہمیں امید ہے کہ اس کا مطلب یہ ہے کہ ہم اب کووِڈ 19 کے بعد کے دور میں داخل ہو رہے ہیں ، ہم اپنے طلبہ اور والدین کو مشورہ دیتے ہیں کہ وہ خود ہی یہ فیصلہ کریں کہ وہ ماسک پہننے کا عمل جاری رکھنا چاہتے ہیں یا نہیں۔

این سیما نے پیر کے روز یہ بھی اعلان کیا کہ کووِڈ 19 کے متاثرین کے لیے گھروں میں الگ تھلگ رہنے کی مدت اب 10 دن سے کم کرکے پانچ دن کردی جائے گی ، جبکہ صرف کووِڈ 19 کے مثبت ٹیسٹ والے اشخاص کو قرنطینہ کرنے کی ضرورت ہوگی اور کے ساتھ قریبی رابطے میں رہنے والے شخص کو ایسا کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

ابوظبی کے رہائشیوں کو الحوسن ایپ کوسبز رکھنے کے لیے ہر30 دن میں ایک بارکرونا وائرس کا پی سی آڑٹیسٹ کروانا ہوگا۔پہلا یہ ٹیسٹ ہر14 دن کے بعد پہلے تھا۔

مزید برآں ،این سیما نے اعلان کیا کہ کووِڈ 19 کے روزانہ کیسوں کی تعداد اب حکومت کی طرف سے شائع نہیں کی جائے گی۔

اسی ماہ متحدہ عرب امارات نے کہا تھا کہ اس نے اپنی قومی کووِڈ 19 ویکسی نیشن مہم کا ہدف حاصل کر لیا ہے اور اعلان کیا ہے کہ ہدف بنائے گئے زمرے میں سے 100 فیصد کو ویکسین لگائی جا چکی ہے۔ملک میں تمام رہائشیوں کو مفت ویکسین لگانے کی پیش کش جاری ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں