پاپائے روم نومبرمیں بحرین کا دورہ کریں گے: ویٹی کن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ویٹی کن نے بدھ کے روزاعلان کیا ہے کہ پاپائے روم پوپ فرانسس نومبرمیں بحرین کا دورہ کریں گے۔اس خلیجی ریاست میں جزیرہ نما عرب کا سب سے بڑا کیتھولک چرچ واقع ہے۔

ویٹی کن نیوزکے مطابق 85 سالہ پوپ فرانسس خلیج فارس میں ملک کا دورہ کرنے والے پہلے پوپ ہوں گے۔

پوپ گذشتہ کچھ عرصے سے گھٹنے کی شدید تکلیف میں مبتلا ہیں اور وہ چلنے پھرنے سے قاصر ہیں۔وہ ڈاکٹر کے مشورے پروہیل چیئراستعمال کرتے ہیں اورآزادانہ نقل وحرکت نہ ہونے کی وجہ سے انھوں نے بہت سی تقریبات منسوخ کردی ہیں۔

پوپ فرانسس 3 سے 6 نومبر کا دورہ کریں گے۔وہ دارالحکومت منامہ اورعوالی شہر جائیں گے اور’’بحرین فورم برائے ڈائیلاگ: مشرق اورمغرب پُرامن انسانی بقائے باہمی‘‘میں شرکت کریں گے۔

بہ طورپاپائے روم پوپ فرانسس کا 39 واں بین الاقوامی دورہ ہوگا۔اس دورے کی مزیدتفصیل بعد میں جاری کی جائے گی۔

لیکن امکان ہے کہ پوپ عوالی میں لیڈی آف عربیہ کے کیتھڈرل کا دورہ کریں گے۔اس کے دروازے گذشتہ سال کھولے گئے تھے۔جدیدطرزکایہ گرجاگھرریاست کے جنوب میں ایک جامع مسجد سے قریباًایک میل (1.6کلومیٹر) اور تیل کے کنویں سے چندقدم کے فاصلے پر واقع ہے۔

یہ گرجاگھر ملک کے 80،000 یا اس سے زیادہ کیتھولک، بنیادی طورپرایشیا، زیادہ تربھارت اور فلپائن سے کارکنوں کی خدمت کرنے کے لیے تعمیر کیاگیا تھا۔

پوپ نے 2014 میں ویٹی کن میں بحرین کے بادشاہ شیخ حمد بن عیسیٰ آل خلیفہ کا استقبال کیا تھا۔انھوں نے مشرقِ اوسط میں امن اوراستحکام کے موضوع پر تبادلہ خیال کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں