گیٹس سے علیحدگی کے مراحل انتہائی تکلیف دہ تھے: ملینڈا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مشہور ترین طلاق کے ایک سال اور مہینوں بعد بھی امریکی ارب پتی بل گیٹس اور ان کی اہلیہ میلنڈا کی علیحدگی کے اثرات تاحال جاری ہے۔

بل گیٹس کی اہلیہ میلنڈا نے ایک مرتبہ پھر پرانی یادوں کو تازہ کرتے ہوئے کچھ انکشافات کئے ہیں ۔ "فارچیون" میگزین کو ایک بیان میں 58 سالہ ملینڈا نے کہا میرے پاس کچھ وجوہات ہے جن کے باعث میں شادی کے تعلقات میں برقرار نہیں رہی۔ تاہم کورونا کے متعلق ایک عجیب بات یہ ہے کہ اس نے مجھے وہ رازداری دی جس کوحاصل کرکے میں نے وہ کیا جو مجھے کرنا چاہیے تھا۔

کرونا پرائیویسی

انہوں نے مزید کہا یہ ایک انتہائی تکلیف مرحلہ تھا۔ تاہم اس تکلیف سے گزرنے کیلئے ایک رازداری کی ضرورت تھی جو کورونا کے باعث میسر آگئی ہے۔ انہوں نے کہا مجھے اس شخص کے ساتھ کام کرنا ہوتا تھا جس سے میں علیحدہ ہو رہی تھی۔ ہر گزرتے دن کے ساتھ میں تکلیف پر قابو پاتی گئی۔ ایسا بھی ہوا کہ 9 بجے میں رو رہی تھی اور دس بجے میں ویڈیو کانفرنس میں شریک تھی۔

یاد رہے بل گیٹس اور ملینڈا نے 1994 میں شادی کی تھی۔ ان کے تین بچے ہیں۔ انہوں نے شادی کے 27 سال بعد اپنی علیحدگی کا اعلان 3 مئی 2021 کو بل گیٹس کے ٹوئٹر اکاؤنٹ سے شائع ہونے والے ایک بیان میں کیا ۔ ان کے سب سے چھوٹے بچے کی عمر 18 سال ہے۔

کرونا وبائی دور کے دوران ملینڈا نے طلاق کے معاملے پر بات چیت کی اور دولت کی تقسیم کے معاملے پر بات چیت ہوئی اور کورونا کے دنوں میں ہی دونوں اطراف کی قانونی ٹیموں نے علیحدگی کے معاملے پر ثالث کے ساتھ بات چیت جاری رکھی تھی۔

واضح رہے اس سے قبل ایک بیان میں ملینڈا علیحدگی کی وجوہات میں سے ایک وجہ بل گیٹس کے کاروباری شخصیت جیفری ایپسٹن سے تعلقات کو بھی قرار دے چکی ہیں۔ جیفری پر جنسی ہراسانی کے الزامات لگ چکے ہیں۔ ملینڈا کے مطابق وہ بل گیٹس کو جیفری سے تعلقات ختم کرنے کا کہتی رہی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں