ایران:خامنہ ای نے قریباً 1900 قیدیوں کی سزائیں معاف یا کم کردیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے پیغمبر اسلام ﷺ کی ولادت باسعادت کے موقع پر قریباً 1900 قیدیوں کی سزاؤں کو یکسر معاف یا کم کردیا ہے۔

رہبرِ اعلیٰ کی ویب سائٹ کے مطابق خامنہ ای نے ایران میں پیغمبراسلام حضرت محمدصلی اللہ علیہ وعلیٰ آلہ وسلم اور امام جعفرصادق رضی اللہ عنہ کی ولادت باسعادت کے موقع پر1862 مجرموں کی سزاؤں کو معاف کردیا ہے یا ان کی سزاؤں میں کمی کردی ہے۔

امام جعفرصادق اہلِ تشیع کے نزدیک بارہ ائمہ میں سے چھٹے نمبر پر ہیں۔عدلیہ کی ویب سائٹ میزان آن لائن کے مطابق ان افراد میں 95 خواتین اور123 سکیورٹی اہلکار شامل ہیں۔اس نے مزید کہا ہے کہ ان میں سے 13 قیدیوں کو سزائے موت سنائی گئی تھی۔

واضح رہے کہ سپریم لیڈر عدلیہ کے سربراہ کی تجویز پراہم مذہبی مواقع پر باقاعدگی سے ایرانی جیلوں میں پابند سلاسل قیدیوں کی سزاؤں میں اجتماعی معافی یا تخفیف کے اعلانات کرتے رہتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں