اپنے ہاں 2000 یوکرینی فوجیوں کو ٹریننگ دینگے: فرانس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فرانسیسی وزیر دفاع سیبسٹین لیکورنو نے ہفتے کے روز اعلان کردیا ہے کہ فرانس اپنی سرزمین پر 2000 یوکرائنی فوجیوں کو تربیت دے گا۔

"اے ایف پی" کے مطابق انہوں نے اخبار "لی پیرسین" کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا کہ یہ فوجی کئی ہفتوں تک ہماری یونٹوں میں شامل رہیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ تربیت تین درجات پر مشتمل ہوگی۔ پہلے مرحلہ میں "جنرل جنگی تربیت" ، دوسرے مرحلہ میں ’’یوکرینیوں کی درخواست پر مخصوص ضروریات جیسے لاجسٹکس‘‘ کی تربیت‘‘ دی جائے گی۔ تیسرے مرحلہ میں ’’فراہم کردہ سامان کے استعمال کی تربیت‘‘ کو شامل کیا جائے گا۔

لیکورنو نے وضاحت پیش کی کہ ہم یہ کام تنازعہ کا فریق بنے بغیر قانون کے اصولوں کا احترام کرتے ہوئے کر رہے ہیں، ہم جنگ میں نہیں ہیں تاہم ہم روسی حملے کے بعد جنگ کے شکار ایک ملک کی مدد کر رہے ہیں۔

فضائی دفاعی نظام کی فراہمی

اس کے علاوہ وزیر دفاع نے اس بات کی بھی تصدیق کی کہ فرانس یوکرین کو کروٹل ایئر ڈیفنس سسٹم فراہم کرے گا۔ انہوں نے اس حوالے سے بدھ کے صدر ایمانوئل میکرون کے اعلان کا حوالہ بھی دیا۔

انہوں نے کہا کہ کیف کو بھیجے جانے والے مختصر فاصلے کے "کروٹل" طیارہ شکن نظاموں کی تعداد یوکرینوں کے ساتھ بات چیت سے طے کی جائے گی۔ فضائی حدود کی حفاظت کیلئے درکار تعداد کو اہمیت دی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ اس ایئر ڈیفنس سسٹم کی ترسیل اگلے دو ماہ کے اندر مکمل کی جائے گی۔

یاد رہے یوکرین جنگ کے آغاز کے بعد سے فرانس کے علاوہ دیگر ملکوں بالخصوص برطانیہ نے بھی یوکرینی فوجیوں کو اپنی سرزمین پر ٹریننگ فراہم کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں