ایردوان بجٹ لاگت کم کرنے کےلیے قبل ازوقت ریٹائرمنٹ پرانتخابی وعدہ پوراکریں گے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترک صدررجب طیب ایردوآن بجٹ پردباؤ کے بارے میں خدشات کی وجہ سے سرکاری اور نجی شعبے کے ملازمین کو قبل ازوقت ریٹائرمنٹ کی پیش کش کرنے کے منصوبے پرنظرثانی کرسکتے ہیں۔

یہ بات ترکی کے سینیر حکام نے جمعرات کو کہی ہے۔ترکی میں آیندہ جون میں صدارتی اور پارلیمانی انتخابات منعقد ہوں گے۔اس سے پہلے قبل از وقت ریٹائرمنٹ صدر کا ایک اہم وعدہ ہے۔ نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بات کرنے والے عہدے داروں کے مطابق ان اصل منصوبوں میں 15 لاکھ افراد کا احاطہ کیا گیا ہے لیکن اب ایردوآن ایک متبادل پرغور کر رہے ہیں اور اس سے کم ملازمین متاثر ہوں گے۔

حکام کا کہنا ہے کہ ایردوآن آیندہ پیر کے روز کابینہ کے اجلاس میں اس ضمن میں کوئی فیصلہ کر سکتے ہیں۔قبل از وقت ریٹائرمنٹ کے مطالبات کو پورا کرنے کے وعدے نے ترک صدرکواپنی حمایت کی بنیاد کو مضبوط بنانے میں مدد فراہم کی ہے۔

لیکن ترک حکومت اب ایک ایسے منصوبے پر غور کر رہی ہے جس میں اہل افراد میں سے صرف 60 فی صد کا احاطہ کیا جائے گا۔بعض حکام کے مطابق اصل منصوبے کی لاگت، جس میں ریٹائرمنٹ پرمعاوضے کی ادائی شامل ہے،250ارب لیرا(13 ارب ڈالر) سے تجاوز کرسکتی ہے۔انھوں نے کہا کہ یہ رقم اس سال اکتوبر میں ملک کے سماجی تحفظ کے نظام کے تحت قریباً ایک کروڑ چالیس لاکھ پنشنرز کو ادا کی جانے والی رقم سے تین گنا زیادہ ہے۔

عہدے داروں نے بتایا کہ متبادل منصوبوں کے تحت سب سے عمررسیدہ ملازمین کو قبل ازوقت ریٹائرمنٹ کی پیش کش کی جائے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں