فرانس اورجرمنی کی ایران میں احتجاج کی پاداش میں نوجوان کوپھانسی چڑھانے کی مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فرانس اورجرمنی نے جمعرات کے روز ایران کی جانب سے مظاہروں میں حصہ لینے کی پاداش میں ایک نوجوان کو پھانسی دینے کی مذمت کی ہے۔ستمبر کے بعد سے حکومت کو ہلا کررکھ دینے والے احتجاجی مظاہروں میں حصہ لینے پرسنائی گئی سزائے موت پر یہ پہلی مرتبہ عمل درآمد کیا گیا ہے۔

فرانس کی وزارت خارجہ کی ترجمان این کلیئر لیجنڈری نے صحافیوں کو بتایا کہ یہ پھانسی دیگر سنگین اور ناقابل قبول خلاف ورزیوں میں سرفہرست ہے۔انھوں نے ایران میں 23 سالہ محسن شکاری کو دی گئی پھانسی کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کی ہے۔

جرمن وزیرخارجہ انالینا بیربوک نے شکاری کو سولی چڑھائے جانے کے بعد ٹویٹ کیا کہ ایرانی حکومت کی جانب سے انسانی جانوں کے تئیں تحقیر لامحدود ہے۔انھوں نے کہا کہ شکاری کو ڈھونگ سمری ٹرائل کے بعد سزائے موت سنائی گئی تھی۔

انھوں نے مزید کہا:’’لیکن پھانسی کی دھمکی آزادی کی خواہش کا گلا نہیں گھونٹے گی‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں