ڈرونز روکنے کیلئے یوکرین کو 275 ملین ڈالر کے امریکی پیکج کا اعلان متوقع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فروری میں یوکرین میں روسی فوجی آپریشن کے آغاز کے بعد سے کیف کے لیے ہتھیاروں اور فنڈز کی صورت میں مغربی امداد جاری ہے۔

باخبر ذرائع نے جمعہ کو اطلاع دی کہ صدر جو بائیڈن کی انتظامیہ جلد ہی یوکرین کے لیے 275 ملین ڈالر کے فوجی امدادی پیکج کا اعلان کرے گی۔

فضائی دفاعی نظام کی مضبوطی

ذرائع نے اشارہ کیا کہ امدادی پیکج میں یوکرین کے فضائی دفاعی نظام کو مضبوط کرنے اور ڈرونز کا مقابلہ کرنے کے لئے ذرائع شامل ہوں گے۔

توقع ہے کہ امریکہ یوکرین کو HIMARS میزائل، ہموی بکتر بند گاڑیاں اور پاور جنریٹر بھی فراہم کرے گا۔ رائٹرز کے مطابق یہ بھی منصوبہ بنایا گیا ہے کہ پینٹاگون کے گوداموں سے ہتھیار اور فوجی ساز و سامان پہنچایا جائے۔

یوکرین کو امداد مسلسل جاری

یہ پیش رفت اس وقت سامنے آئی ہے جب چند روز قبل ہی امریکہ نے گزشتہ ماہ کی روسی بمباری سے یوکرین میں بجلی گرڈ کو ہونے والے نقصان کے اثرات کو کم کرنے کیلئے اہم مالی امداد دینے کا اعلان کیا تھا۔

ذرائع کے مطابق بائیڈن انتظامیہ نے یوکرین اور مالڈووا میں توانائی کے شعبے کی مدد کیلئے 1.1 بلین ڈالر مختص کیے ہیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ 24 فروری کو مغربی پڑوسی کی سرزمین پر روسی فوجی کارروائی کے آغاز کے بعد سے واشنگٹن اور اس کے یورپی اتحادیوں نے کیف پر فوجی امداد کی بھرمار کر رکھی ہے۔ یوکرینی فوج کو درست نشانہ لینے والے جدید میزائل فراہم کیے گئے ہیں۔ طیارے اور ٹینک شکن میزائلوں سمیت دیگر جنگی ہتھیار بھی فراہم کیے گئے ہیں۔

یورپی امداد بھی

واشنگٹن عام طور پر یوکرین کو براہ راست فنڈز فراہم کرنے کے بجائے یوکرین سیکیورٹی اسسٹنس انیشی ایٹو کے فنڈز کو مینوفیکچررز سے ہتھیار خریدنے کے لیے استعمال کرتا ہے۔ 24 فروری کو روسی آپریشن کے آغاز کے بعد سے اکتوبر کے دوران تک یوکرین کے لیے امریکہ کی کل سیکیورٹی امداد 17.5 بلین ڈالر سے زیادہ ہو گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں