برطانیہ کی روسی فوجی رہ نماؤں اور ایرانی تاجروں پر پابندیاں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

برطانیہ نے کل مُنگل کو یوکرین کے شہروں کو نشانہ بنانے والے میزائل حملوں میں ملوث روسی فوجی رہ نماؤں کے ساتھ ساتھ حملوں میں استعمال ہونے والے فوجی ڈرون کی تیاری اور سپلائی میں ملوث ایرانی تاجروں پر پابندیاں عائد کی ہیں۔

اٹلی کے وزیر دفاع نے منگل کو پارلیمنٹ کو بتایا کہ روس کے حملے کے خاتمے کے لیے امن مذاکرات شروع ہونے کے بعد یوکرین کو ہتھیاروں کی ترسیل بند ہو جائے گی۔

وزیر گویڈو کروسیٹو نے سینیٹ میں خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ "میں سمجھتا ہوں کہ فوجی امداد جلد یا بدیر بند ہونی چاہیے۔ یہ تب ختم ہو جائے گی جب ہم امن مذاکرات کریں گے جس کی ہم سب کو امید ہے۔"

اس ماہ کے شروع میں اطالوی کابینہ نے ایک حکم نامہ منظور کیا جس میں یوکرین کو ہتھیاروں کی سپلائی اگلے سال تک جاری رہنے کی اجازت دی گئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں