سائیکلون بم : شدید سردی کے طوفان نے امریکہ کو لپیٹ میں لے لیا، دو تہائی آبادی متاثر

لاکھوں امریکیوں کا سفر اور 5 ہزار پروازیں متاثر ہو گئیں، 1.25سنٹی میٹر گھنٹہ کی رفتار سے برفباری ہو سکتی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جمعہ کو ریاست ہائے متحدہ امریکہ کے بیشتر حصوں کو شدید سردی نے اپنی لپیٹ میں لے لیا۔ ماہرین نے ’’سائیکلون بم‘‘ کے خطرے کا اظہار کر دیا۔

وسط مغرب میں موسم سرما کے ایک بڑے طوفان نے حکام کو تقریباً دو تہائی آبادی کو موسم کی شدید وارننگ جاری کرنے پر مجبور کر دیا ہے۔ سردی کی اس لہر کے باعث لاکھوں امریکی شہریوں کے سفر کرنے کے منصوبے خلل کا شکار ہو گئے۔

سائیکلون بم

ماہرین کے مطابق کرسمس کے ساتھ ختم ہونے والے اس ہفتے میں متوقع طوفان ’’سائیکلون بم‘‘ کی شکل اختیار کرلے گا۔ بھاری برف باری سےشمالی میدان علاقوں اور عظیم جھیلوں کے علاقے بالائی مسی سیپی اور مغربی نیویارک میں حد نگاہ انتہائی کم ہو جائے گی۔ شدید سردی اور تیز ہوائیں شدت اختیار کر جائیں گی۔ سردی کی یہ لہر امریکہ اور میکسیکو کی سرحد تک جنوب تک پھیل جائے گی۔

سخت ترین سردی

حکام نے خلیجی ساحلی ریاستوں ٹیکساس، لوزیانا، الاباما اور فلوریڈا میں شدید سردی کی وارننگ جاری کردی ہے۔ یو ایس نیشنل ویدر سروس نے کہا ہے کہ ’’سائیکلون بم‘‘ جسے ’’بم ہیری کین‘‘ بھی کہا جاتا ہے میں 1.25 سینٹی میٹر گھنٹہ کی رفتار سے برف باری ہونے کا امکان ہے۔ انتہائی تیز ہواؤں میں برفباری سے حد نگاہ تقریبا صفر ہو جاتی ہے۔ سردی کی شدید لہر کے باعث جمعرات اورجمعہ کو امریکہ میں پانچ ہزار سے زیادہ پروازیں منسوخ کردی گئیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں