اپنے اوپرحملہ کئے جانے کی جھوٹی ویڈیو شیئر کرنے پر دو سعودی شہری گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ہفتے کے روز سعودی سکیورٹی حکام نے دو شہریوں کو ایک من گھڑت ویڈیو کلپ شائع کرنے پر گرفتار کرنے کا اعلان کیا۔

اس کلپ کو وائرل کرنا سعودی عرب کے انسداد سائبر کرائم قانون کی خلاف ورزی میں شمار ہوتا تھا۔ شمالی سعودی عرب میں الجوف کے علاقے میں پولیس نے سوشل میڈیا پر بصری مواد پوسٹ کرنے کے الزام میں دو شہریوں کو گرفتار کیا، جن میں سے ایک نے دعویٰ کیا ہے کہ اس پر ایک سڑک پر "حملہ" کیا گیا تھا۔

کانفرنس کے طریقہ کار سے انکشاف ہوا کہ مواد "جھوٹا" تھا اور اس میں غلط معلومات اور "الزامات" شامل تھے، جو اینٹی سائبر کرائم قانون کی خلاف ورزی ہے۔ دونوں مدعا علیہان نے مملکت میں سوشل میڈیا پر پھیلائی گئی ایک ویڈیو کلپ شائع کیا اور اس کلپ میں انہوں نے سڑک پر "حملہ" کیے جانے کے بارے میں بات کی اور کہا کہ اس حملے کی وجہ سے ان کی گاڑی کو نقصان پہنچا ہے۔

تاہم معلوم یہ ہوا کہ گاڑی کو کسی آہنی چیز کی وجہ سے نقصان پہنچا تھا۔ یہ آہنی چیز حادثاتی طور پر سڑک پر آگری تھی۔ سکیورٹی کے خصوصی دستوں نے بروقت جائے حادثہ پر پہنچ کر ضروری کارروائی شرو ع کردی تھی۔ سکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ جھوٹا مواد نشر کرنے والے دونوں افراد کو حراست میں لیکر پبلک پراسیکیوشن کے حوالے کردیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں