پیلے نے میچ کے دوران چال چلی اور 30 سیکنڈ میں ایک ملین ڈالر کیسے کما لئے؟

جوتے پہننے کیلئے ریفری کو رکنے کا کہا، جوتوں کا برانڈ دنیا کے ایک ارب شائقین کو دکھائی دیتا رہا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

فٹ بال نے پیلے کو 20 سال تک پیشہ ورانہ مہارت کی تربیت دی اور انہیں برازیل کے امیر ترین لوگوں میں سے ایک بنا دیا، لیکن جب وہ اپنے فٹ بال کی شان کے عروج پر تھے۔ اگر وہ ریٹائرمنٹ کے بعد پیشہ ورانہ کیرئیر کے وقت کی طرح تنخواہ وصول کرتے رہتے تو پچھلے سال امریکی اقتصادی میگزین فوربز کے اندازے کے مطابق ان کی سالانہ تنخواہ 223 ملین ڈالر ہوچکی ہوتی۔ فٹ بال کھلاڑی اپنے میچوں سے جو حاصل کرتے ہیں اسے کے علاوہ ان کی دیگر ذرائع سے بھی دسیوں کروڑوں کی آمدنی ہوتی ہے۔ ایک سٹار اشتہارات میں آکر ، کمیشن حاصل کرکے اور سامان کی فروخت کرکے بھی آمدن حاصل کرتا ہے۔

اگرچہ "بادشاہ " جیسا کہ برازیلین پیلے کو یہی کہتے تھے، کافی عرصہ پہلے کھیل سے ریٹائر ہو گئے تھے لیکن انہوں نے 100 ملین ڈالر سے زیادہ کے اثاثے چھوڑے تھے۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کو ویب سائٹ ’’سیلیبریٹی نیٹ ورتھ ‘‘پر ملنے والی معلومات کے مطابق وہ ہے جو ان کے 7 بچوں کو دو طلاق یافتہ بیویوں سے وراثت میں ملے گا۔ اس کے علاوہ ایک بے اولاد بیوہ ہے جس کا نام مارسیا آوکی ہے ، یہ جاپانی نژاد ہے۔اس نے انہوں نے 6 سال قبل شادی کی تھی، اس وقت مارسیا کی عمر 50 سال تھی۔

چالاکی سے کمائی گئی دولت

پہلے کی تمام آمدن وہ نہیں ہے جو انہوں نے صرف فٹ بال سے کمائی ہے۔ سٹارز کی بعض آمدن اس کے علاوہ بھی ہوتی ہے۔ 2008 میں شائع ہونے والی ایک کتاب میں اس کا تذکرہ سنیکر وارز یا "سنیکر وار" سے کیا گیا تھا ۔ اس کتاب کو خاتون برطانوی صحافی باربرا سمٹ نے لکھا تھا۔ وہ فنانشل ٹائمز، ایس دی اکانومسٹ میگزین اور دیگر سمیت مشہور میڈیا آؤٹ لیٹس کے لیے لکھتی رہیں۔ انہوں نے کتاب میں بتایا کہ کیسے پیلے نے میکسیکو میں 1970 کے ورلڈ کپ کے کوارٹر فائنل میں پیرو کے ساتھ میچ میں 30 سیکنڈ تک ریفری کو دھوکہ دیا۔

میچ کی سیٹی بجنے سے پہلے، "پیلے" ریفری کے پاس پہنچا اور ایک لمحے کے لیے رکنے کو کہا تاکہ وہ اپنے جوتے باندھ سکے۔ اس کو ہم اوپر پیش کی گئی ویڈیو میں بھی دیکھ سکتے ہیں۔ یہ ایک ایسا وقت تھا جب سب کی آنکھیں اور کیمرے اب تک کے سب سے بڑے فٹ بال کھلاڑی کے ساتھ ساتھ اس کے جوتوں پر بھی تھیں۔ میزبان نے کہا کہ جوتوں کا برانڈ پوما تھا اور سینکڑوں ٹیلی ویژن سٹیشنوں کے کیمروں پر ایک ارب سے زیادہ شائقین کے سامنے 30 سیکنڈ تک یہ منظردکھائی دیا۔

اس چال سے پیلے کو کمپنی سے 120,000 ڈالر جو ان دنوں تقریباً ایک ملین ڈالر بنتے ہیں ملے۔ اس کے علاوہ کمپنی کے ساتھ معاہدے کے تحت انہیں چار سال کے دوران ایک لاکھ ڈالر ملے۔ اس کے علاوہ اس جوتے کی فروخت سے کمیشن بھی ملتا رہا جو کمپنی نے پیلے کے نام کے ساتھ تیار کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں