گڑھے میں گر کر جان بحق ہونے والے مراکشی بچے ریان کے بھائی کی پیدائش

گذشتہ برس ریان یکم فروری کو گڑھے میں گر کر فوت ہوا، اس کے والدین کو یکم فروری 2023ء کو اللہ نے بچے کی نعمت سے نوازا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مراکش میں ایک سال قبل ایک گہرے کنوئیں میں گر کر انتقال کر جانے والے کم سن بچے ریان کے والدین کو اللہ نے ایک بار پھر اولاد نرینہ کی نعمت سے نوازا ہے۔ یہ محض اتفاق ہے کہ ریان کی یوم وفات پر ان کے ہاں بیٹے کی ولادت ہوئی۔

مقامی میڈیا کے مطابق مراکشی بچے ریان، جس کی موت نے ایک سال قبل دنیا کو ہلا کر رکھ دیا تھا، کے والدین کے ہاں جمعرات کو اس کی پہلی برسی کے موقع پر ایک بچہ پیدا ہوا۔

اس کی والدہ سمیہ خرشیرش نے مقامی "شوف ٹی وی" ویب سائٹ کو بتایا، "کل ریان کے سانحے کی برسی تھی اور آج ہمارے ہاں بچہ پیدا ہوا۔ اللہ نے ہم سے بچہ لیا نہیں، بلکہ دیا ہے۔ آپ تصور نہیں کر سکتے کہ میں کتنی خوش ہوں"۔

یکم فروری کو جوڑے کو اپنے بیٹے کو کھونے کے المیے کا سامنا کرنا پڑا جب وہ یکم فروری 2022ء کو شمالی مراکش کے ایک دور دراز گاؤں میں گھر کے قریب 32 میٹر گہرے خشک کنویں میں گر کر فوت ہو گیا تھا۔

میڈیا کی وجہ سے یہ سانحہ تیزی سے ایک عالمی واقعے میں بدل گیا۔ اس حادثے پر لاکھوں لوگوں کو صدمے سے دوچار کر دیا تھا۔ بچے کو پانچ دن تک زندہ نکالنے کی کوششیں کی گئیں مگر بدقسمتی سے بچے کو بچایا نہیں جا سکا تھا۔

کل جمعرات اخبار "ہسپریس" نے بتایا کہ ریان کی والدہ کی صحت کی حالت مستحکم ہے۔ انہوں نےشمالی علاقے میں واقع ثانیہ الرمل ہسپتال میں بچے کو جنم دیا۔ اخبار کے مطابق مراکشی جوڑے کے ہاں ٹھیک ایک سال بعد بچے پیدائش محض ایک اتفاق ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں