یوکرین کے لیے 2.2 بلین ڈالر کی امریکی فوجی امداد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکہ نے جمعہ کو اعلان کیا کہ وہ یوکرینی افواج کی روسی افواج کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت کو بڑھانے کے لیے کیف کو 2.2 بلین ڈالر کی اضافی فوجی امداد فراہم کرے گا۔ پینٹاگون نے ایک بیان میں کہا کہ اس امداد میں خاص طور پر یوکرین کو اپنی آبادی کے دفاع میں مدد کرنے کے لیے اہم فضائی دفاعی صلاحیتوں کے ساتھ ساتھ بکتر بند پیادہ گاڑیاں اور ’’ ہمارس‘‘ میزائل لانچرز کے لیے گولہ باررود شامل ہے۔

جنوری میں پینٹاگون نے یوکرین کے لیے فوجی امداد کی ایک نئی کھیپ کا اعلان کیا جس میں سینکڑوں بکتر بند گاڑیاں اور فضائی دفاع کے لیے سپورٹ شامل ہے تاہم اس میں بھاری "ابرامس" ٹینک شامل نہیں تھے۔ نئے امدادی پیکج میں 59 بریڈلی جنگی گاڑیاں اور 90 سٹرائیکر انفنٹری گاڑیاں بھی شامل ہیں۔

امریکی فوج یوکرین کو 53 مائن ریزسٹنٹ آرمرڈ وہیکلز ( ایم آر اے پی ) اور 350 ایچ 998 ہمویز بھی دے گا۔ واشنگٹن یوکرینی فوج کو ہزاروں گولہ بارود کے علاوہ ناسماس اور ہمارس طیارہ شکن نظام کے لیے اضافی میزائل اور ایوینجر 8 طیارہ شکن نظام بھی حوالے کرے گا۔ ایونجر 8 مختصر فاصلے کا طیارہ شکن نظام ہے۔ اس نئی قسط کے ساتھ 24 فروری کو روسی حملے کے آغاز کے بعد سے یوکرین کے لیے امریکی فوجی امداد 26.7 بلین ڈالر تک بڑھ گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں