بائیڈن پولینڈ پہنچ گئے، امریکہ کا یوکرین کے لیے 460ملین ڈالر امداد کا اعلان

نئے امدادی پیکج میں ’’ہمارس‘‘میزائل سسٹم کے ساتھ ساتھ جیولن اینٹی ٹینک میزائل سسٹم کے لیے گولہ بارود بھی دیا جائیگا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پولینڈ کی خبر رساں ایجنسی کے مطابق، پیر کی شام امریکی صدر جو بائیڈن یوکرین سے ٹرین کے ذریعے پولینڈ پہنچ گئے۔ کیف کے اچانک دورے کے بعد بائیڈن مقامی وقت کے مطابق تقریباً 20:30 بجے جنوب مشرقی شہر پرزیمیسل کے ٹرین سٹیشن پر پہنچے۔ ذرائع نے بتایا کہ امریکی محکمہ دفاع نے پیر کو کہا تھا کہ امریکہ یوکرین کو 460 ملین ڈالر کی نئی سیکیورٹی امداد فراہم کرے گا۔ اس امداد میں ’’ہمارس‘‘ میزائل سسٹم کے ساتھ ساتھ جیولن اینٹی ٹینک میزائل سسٹم کے لیے گولہ بارود بھی شامل ہے۔

پینٹاگون نے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکی محکمہ دفاع نے یوکرین کی اہم حفاظتی اور دفاعی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے امدادی پیکج مختص کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ پیکیج میں HIMARS سسٹم کے لیے اضافی گولہ بارود اور امریکہ کی طرف سے فراہم کردہ ہووٹزر بھی شامل ہیں جسے یوکرین استعمال کرتا ہے۔ اینٹی ٹینک سسٹم اور فضائی نگرانی کے ریڈار کے علاوہ اپنے ملک کی حفاظت کریں۔

امریکی محکمہ خارجہ نے ایک الگ بیان میں کہا کہ امریکی وزیر خارجہ اینٹنی بلینکن نے یوکرین کے لیے ملک کے توانائی کے نظام کو بحال کرنے کے لیے اضافی 10 ملین ڈالر دینے کا اعلان کیا۔ جنگ کے آغاز کی پہلی برسی سے کچھ دن قبل کیف کے غیر اعلانیہ دورے کے دوران بائیڈن نے پیر کو یوکرین کو ، چاہے کتنا ہی وقت کیوں نہ لگے، مدد فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں