سعودی حکومت کابین الاقوامی کمپنیوں کوالریاض منتقلی کی ترغیب دینے کا نیا پروگرام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی حکومت نے ایک نیا پروگرام ترتیب دیا ہے جس کا مقصد بین الاقوامی کمپنیوں کو مملکت میں راغب کرنے کے منصوبے کوتیزکرنا ہے۔

بین الاقوامی کمپنیوں کواپنے علاقائی ہیڈکوارٹرز سعودی دارالحکومت میں منتقل کرنے کی ترغیب دینے کے پروگرام کی نگرانی شاہی کمیشن برائے الریاض کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ارکان کریں گے۔

یہ بورڈ منگل کو وزراتی کونسل کے اجلاس میں قائم کیا گیا تھا۔واضح رہے کہ سعودی حکومت نے فروری 2021 میں اعلان کیا تھا کہ وہ 2024 سے صرف ان کمپنیوں کے ساتھ معاہدوں پر دست خط کرے گی جنھوں نے اپنے علاقائی صدردفاترسعودی عرب میں قائم کیے ہوں گے۔

اُسی سال اکتوبر تک 44 بین الاقوامی کمپنیوں کو مملکت میں اپنے علاقائی صدردفاترقائم کرنے کے لیے لائسنس جاری کیے گئے تھے۔

حالیہ مہینوں میں، زیادہ سے زیادہ تارکین وطن اور بین الاقوامی کمپنیاں مملکت میں منتقل ہو رہی ہیں اور وہ خطے کے دیگراہم مراکزسے دورکاروبار کو راغب کرتی ہے۔

ایسی ہی ایک کمپنی پیپسی کو ہے جس کے مشرق اوسط کے چیف ایگزیکٹوآفیسر(سی ای او) نے گذشتہ ماہ العربیہ کو بتایا تھا کہ کمپنی کی اعلیٰ قیادت کی ٹیم الریاض منتقل ہو گئی ہے۔

سعودی وزیرخالدالفالح نے فنانشیل ٹائمزکو بتایا تھاکہ جو بین الاقوامی کمپنیاں اپنے صدردفاتر سعودی عرب منتقل کریں گے، انھیں ٹیکس میں کچھ ریلیف ملنے کا امکان ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں