برطانوی شہزادہ ہیری "میل آن سنڈے" کے خلاف لڑے بغیر مقدمہ جیتنے کے لیے پر امید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانوی شہزادہ ہیری جمعہ کے روز پبلشر" ایسوسی ایٹڈ اخبارات" کے خلاف اپنے ہتک عزت کا دعوی جیتنے کی کوشش کریں گے۔ ان کے وکیل نے کہا کہ برطانوی شاہی برطانوی ٹیبلوئڈ کے خلاف اپنی قانونی جنگ کو تیز کر رہے ہیں۔

کیس کی ابتدائی سماعت اب لندن کی رائل کورٹ آف جسٹس میں جمعہ (17 مارچ) کو ہونے والی ہے۔

ڈیوک آف سسیکس شہزادہ ہیری نے ایسوسی ایٹڈ نیوز پیپرز لمیٹڈ کے خلاف ایک مضمون کے لیے قانونی چارہ گوئی شروع کی تھی۔

ہیری نے گزشتہ سال ایسوسی ایٹڈ نیوز پیپرز کے ایک اخبار "میل آن سنڈے "کے ایک مضمون پر مقدمہ دائر کیا تھا جس میں الزام لگایا گیا تھا کہ 38 سالہ ہیری نے اپنے پولیس تحفظ کو بحال کرنے کے لیے اپنی قانونی لڑائی کی تفصیلات خفیہ رکھنے کی کوشش کی تھی - جسے 2020 میں شاہی فرائض سے سبکدوش ہونے کے بعد واپس لے لیا گیا تھا۔

لندن کی ہائی کورٹ نے جولائی میں فیصلہ دیا تھا کہ اخبار کی رپورٹ ہتک آمیز تھی، جس سے ہیری کے لیے برطانیہ کے اس بڑے میڈیا پبلشر خلاف کیس آگے بڑھانے کی راہ ہموار ہوئی۔

ان کے وکلاء نے "روئٹرز" سے کہا کہ وہ جمعہ کو ہونے والی سماعت میں جج میتھیو نکلن سے سماعت کی ضرورت کے بغیر ان کے حق میں مختصر فیصلہ سنانے کی درخواست کریں گے۔

دو سال قبل، ہیری کی امریکی بیوی، 41 سالہ میگھن نے بھی اسی طرح "میل آن سنڈے" کے خلاف اپنے پرائیویسی کیس میں ایک مقدمہ جیتا تھا جب اخبار نے ان کے ہاتھ سے لکھے ہوئے خط کے کچھ حصے شائع کیے جو انہوں نے اپنے والد، تھامس مارکل کو بھیجے تھے۔

یہ جوڑا 2018 میں اپنی شادی کے وقت سے لے کر اب تک ٹیبلوئڈ پیپرز کے خلاف ، نسل پرستی ، اور جھوٹ پھیلانے جیسے الزامات عائد کرتے ہوئے متعدد عدالتی مقدمات میں الجھا ہوا ہے۔

میڈیا کی دخل اندازی ایک اہم وجہ تھی جس کا انہوں نے شاہی فرائض سے دستبردار ہونے اور نئی زندگی اور کیریئر بنانے کے لئے کیلیفورنیا جانے پر حوالہ دیا۔

ہیری، نے جنوری میں ایک ٹی وی انٹرویو میں بھی کہا تھا کہ انہیں امید ہے کہ ان کی قانونی کارروائی سے میڈیا کی اصلاح میں مدد ملے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں