روس اور یوکرین

روس ہمسایہ بیلاروس میں ٹیکٹیکل جوہری ہتھیار نصب کرے گا؛معاہدے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

روس نے ہمسایہ ملک بیلاروس کے ساتھ جوہری ہتھیاروں کی منتقلی سے متعلق ایک معاہدہ طے کیا ہے۔اس کے تحت بیلاروس کی سرزمین پرروس اپنے ٹیکٹیکل جوہری ہتھیار نصب کرے گا۔

روسی خبررساں ایجنسی تاس کے مطابق صدرولادی میرپوتین نے ہفتے کے روز اس معاہدے کا اعلان کیا ہے اورکہا ہے کہ اس اس طرح کے اقدام سے جوہری عدم پھیلاؤ کے معاہدوں کی خلاف ورزی نہیں ہوگی۔انھوں نے کہاکہ امریکا نے بھی یورپی اتحادیوں کی سرزمین پر جوہری ہتھیار نصب کررکھے ہیں۔

صدر پوتین نے کہا کہ بیلاروس کے صدرالیگزینڈر لوکاشینکو طویل عرصے سے پولینڈ کے ساتھ واقع اپنے ملک کے سرحدی علاقے میں ٹیکٹیکل جوہری ہتھیاروں کی تنصیب پر زور دے رہے تھے۔

انھوں نے کہا کہ ہم نے لوکاشینکو کے ساتھ اس بات پراتفاق کیا ہے کہ ہم عدم پھیلاؤ کے نظام کی خلاف ورزی کیے بغیربیلاروس میں ٹیکٹیکل جوہری ہتھیار نصب کریں گے۔

انھوں نے بتایاکہ روس یکم جولائی تک بیلاروس میں ٹیکٹیکل جوہری ہتھیاروں کی تنصیب کے لیے ڈھانچا مکمل کرے گا۔انھوں نے واضح کیا کہ روس دراصل منسک کو ہتھیاروں کا کنٹرول منتقل نہیں کرے گا۔ روس پہلے ہی بیلاروس میں 10 طیارے بھیج چکا ہے جو ٹیکٹیکل جوہری ہتھیار لے جانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں