ایڈم نیومن کاسعودی عرب میں رئیل اسٹیٹ کے شعبے میں اسٹارٹ اپ پرغور

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

امریکا کے ارب پتی ایڈم نیومن نے سعودی عرب میں سرمایہ کاری کے مواقع کی تعریف کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ مملکت میں رئیل اسٹیٹ میں اسٹارٹ اپ کے آغاز پرغورکررہے ہیں۔

میامی بیچ، فلوریڈا میں ایک کانفرنس کے دوران میں ایک انٹرویو میں نیومین نے مارک اینڈریسن اور بن ہورووٹز سے اپنے نئے اسٹارٹ اپ میں ان کی سرمایہ کاری اور مملکت کے لیےان کے مشترکہ جوش و خروش کے بارے میں بات کی ہے۔ ہورووٹز نے سعودی عرب کو’’اسٹارٹ اپ ملک‘‘قرار دیتے ہوئے اس کی تعریف کی ہے۔

ہورووٹز نے کہا:’’سعودی عرب کا ایک بانی ہے۔آپ اسے بانی نہیں کہتے، آپ اسے اس کا شہنشاہ معظم کہتے ہیں‘‘۔وہ ’’فلو کو وہاں لانے کے لیے پرجوش‘‘ہیں۔

سعودی عرب کے سب سے بڑے خودمختار دولت فنڈکی حمایت یافتہ ایک غیرمنافع بخش تنظیم کی جانب سے منعقد ہونے والی اس کانفرنس میں ہورووٹز نے اس بات پرافسوس کا اظہارکیا کہ 2020 میں ان کی کمپنی وینچرکیپٹل فرم کے شریک بانی اینڈریسن نے ایک بلاگ پوسٹ میں کہاتھاکہ یہ 'تعمیر کا وقت' ہے، لیکن امریکا میں اس پرغور نہیں کیا گیا اوراس میں زیادہ تبدیلی نہیں آئی۔ ہورووٹز کا کہنا تھا کہ’’امریکی حکومت کے 50 افراد نے مارک سے اس بارے میں بات کرنے کے لیے رابطہ کیامگرپھرعملاًبالکل بھی کچھ نہیں ہوا‘‘۔

لیکن جب ہورووٹز نے اکتوبرمیں سعودی عرب کا دورہ کیا،امریکامیں سعودی سفیرشہزادی ریما بنت بندر کے ساتھ دوپہر کا کھانا کھایا اور حال ہی میں اس کے خودمختاردولت فنڈ کے گورنر یاسرالرمیان سے ملاقات کی تو وہ بہت پرجوش تھے۔

ہورووٹز نے بتایا کہ ’’الرمیان نے ان سے کہا:’’چلو چلتے ہیں اورایک ہفتے کے اندرہم نے نصف درجن انتہائی دلچسپ ملاقاتیں کیں۔اپریل میں، ہم اپنی کمپنیوں کوسعودی عرب میں لارہے ہیں اورایک اسٹارٹ اپ ایسا ہی محسوس کرتا ہے‘‘۔

سعودی عرب کے لیے دلچسپی اورتعریف مملکت کے کاروباری ماحول کے لیے سرمایہ کاروں کی خواہش کی نشان دہی کرتی ہے جبکہ امریکابڑی ٹیکنالوجی کمپنیوں میں ملازمین کی برطرفیوں اور بینکاری بحران کے نتائج سے نبردآزما ہے۔اس سے یہ بھی ظاہر ہوتا ہے کہ سرمایہ کار اب مملکت کے لیے اپنے کھلے پن کے بارے میں شرمندہ نہیں ہیں۔

نیومن کی فرم فلو اب ’وی ورک‘ کا کمیونٹی پر مبنی ہاؤسنگ ورژن بننا چاہتی ہے۔اس رئیل اسٹیٹ فرم سے انھیں 2019 میں عوامی پیش کش کی تباہ کن کوشش کے بعد چیف ایگزیکٹو آفیسر کے عہدے سے ہٹا دیا گیا تھا۔

ہاؤسنگ کی اہمیت بیان کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ’’اگرآپ خود کو زمینی طورپر محفوظ محسوس نہیں کرتے، اگر آپ کسی کمیونٹی کا حصہ نہیں ہیں تو ہم آپ کے ساتھ کسی اورچیزکے بارے میں بات چیت نہیں کرسکیں گے‘‘۔

نیومن نے مملکت کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ یہ "قریباًایک اسٹارٹ اپ کی طرح محسوس ہوتا ہے‘‘۔ان کے بہ قول مصنوعی ذہانت اور دیگرٹیکنالوجیز دنیا میں ڈرامائی تبدیلیوں کے امکانات پیش کرتی ہیں،الّایہ کہ اگر ہم ہر ایک چیز کومنفی انداز میں دیکھنا بند کردیں۔ہمیں یہ منتخب کرنے کا موقع نہیں ملتا کہ زندگی میں کیاہوتا ہے۔ہمیں یہ منتخب کرنا ہوتاہے کہ ہم اس پر کس طرح ردِّعمل ظاہرکرتے ہیں۔یہ ان کی شاہ معظم جیسے رہ نما ہیں جو دراصل ہمیں وہاں لے جائیں گے جہاں ہم جانا چاہتے ہیں‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں