خادم الحرمین الشریفین کے زیرصدارت جدہ میں کابینہ کا اجلاس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کے زیرصدارت منگل کوجدہ میں کابینہ کا اجلاس ہوا۔اس میںکابینہ کو سعودی عرب کے متعدد ممالک کے ساتھ ہونے والے مذاکرات پر بریفنگ دی گئی جس میں ولی عہد اور کویت کے ولی عہد کے درمیان ٹیلی فون پرگفتگو بھی شامل ہے جس میں انھوں نے دوطرفہ تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امورکا جائزہ لیا ہے۔

کابینہ نے سعودی عرب اورایران کے درمیان تعلقات کی بحالی کے معاہدے سے متعلق پیش رفت اور بیجنگ میں دونوں ممالک کے مابین ہونے والی بات چیت پر بھی غور کیا۔اس میں معاہدے پرتوجہ مرکوز کی گئی تھی اور دونوں ممالک کے مابین سفارتی اور قونصلر کام کی بحالی کے لیے ضروری اقدامات کو مربوط کیا گیا تھا۔ بات چیت میں بیجنگ معاہدے پر عمل درآمد کو فعال بنانے اور اس پرعمل درآمد کی اہمیت پر زور دیا گیا، اس طرح باہمی اعتماد میں اضافہ اور تعاون کو وسعت دینے اور خطے میں سلامتی، استحکام اور خوش حالی کے حصول میں کردار ادا کرنے کی اہمیت پر زور دیا گیا۔

اجلاس کے بعد سعودی پریس ایجنسی (ایس پی اے) کو دیے گئے ایک بیان میں وزیراطلاعات سلمان بن یوسف الدوسری نے کہا کہ کابینہ نے تمام ایجنسیوں کی جانب سے رمضان المبارک کے دوران میں زائرین کو پیش کی جانے والی خدمات کے معیار کے بارے میں بھی دریافت کیا ہے۔

کابینہ نے اس بات پر زور دیا کہ اسمارٹ شہروں، ایوی ایشن سکیورٹی اور مصنوعی ذہانت کے شعبوں سے متعلق متعدد بین الاقوامی اشاریوں میں مملکت کی ترقی یافتہ پوزیشن ان کے علاوہ دیگر شعبوں پر ریاست کی طرف سے دی جانے والی توجہ اور حمایت کی عکاسی کرتی ہے، تاکہ وہ ان شعبوں اور انٹرپرینیورشپ میں عالمی سطح پر مسابقت جاری رکھ سکیں۔

وزیر نے مزید کہا کہ کابینہ نے خادم حرمین شریفین اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی جانب سے 70 ملین سعودی ریال کے دو فراخدلانہ عطیات کے ذریعے خیراتی کاموں کی قومی مہم کے ذریعے خیراتی کاموں، راست بازی کوفروغ دینے،سماجی ذمہ داری اور معاشرے کے ارکان کے درمیان یک جہتی کے لیے حکومت کے اقدامات کو سراہا۔

کابینہ کے ارکان نے ولی عہد کی سفارش پر خادم حرمین شریفین کی جانب سے سٹیزن اکاؤنٹ پروگرام اور مستحقین کے لیے عارضی اضافی امداد میں چار ماہ کی توسیع کے علاوہ اس پروگرام میں رجسٹریشن جاری رکھنے کے اقدام کو بھی سراہا۔اس کا مقصد عالمی سطح پرقیمتوں کے اثرات سے خاندانوں کومحفوظ رکھنا ہے۔

کابینہ کوایجنڈے میں شامل متعدد امور پر بریفنگ دی گئی اوردرج ذیل فیصلے کیے گئے::

وزیر توانائی یا ان کے نائب کو مملکت سعودی عرب اور ترکیہ کی حکومتوں کے درمیان توانائی کے شعبے میں تعاون کے لیے مفاہمت کی یادداشت کے مسودے کے بارے میں ترک فریق کے ساتھ بات چیت کا اختیار دیا گیا ہے۔

سعودی عرب کی وزارت توانائی اور عوامی جمہوریہ چین کی نیشنل انرجی ایڈمنسٹریشن کے درمیان صاف ہائیڈروجن توانائی کے شعبے میں مفاہمت کی یادداشت کی منظوری دی گئی۔

ماحولیات، پانی اور زراعت کے وزیر – یا نائب – کو مملکت سعودی عرب کی وزارت ماحولیات، پانی اور زراعت اورعوامی جمہوریہ چین کی وزارت زراعت اور دیہی امور کے درمیان زراعت کے شعبے میں مفاہمت کی یادداشت کے مسودے کے بارے میں چینی فریق کے ساتھ بات چیت کا اختیار دیا گیا ہے۔

کابینہ نے سعودی عرب کی وزارت ماحولیات، پانی اور زراعت اور جمہوریہ کرغیزستان کی قدرتی وسائل، ماحولیات اور تکنیکی نگرانی کی وزارت کے درمیان ماحولیاتی تحفظ سے متعلق مفاہمت کی یادداشت کی منظوری دی ہے۔

سعودی عرب کی وزارت سیاحت اور کوسٹاریکا ٹورازم انسٹی ٹیوٹ کے درمیان سیاحت میں تعاون کے لیے مفاہمت کی یادداشت کی منظوری دی گئی ہے۔

سعودی عرب اورتھائی لینڈ کی حکومت کے درمیان براہ راست سرمایہ کاری کے شعبے میں تعاون کے فروغ کے لیے مفاہمت کی یادداشت کی منظوری دی گئی ہے۔

کابینہ نے سعودی عرب کی زکوٰۃ، ٹیکس اور کسٹمز اتھارٹی اور عوامی جمہوریہ چین کی اسٹیٹ ٹیکسیشن ایڈمنسٹریشن کے درمیان ٹیکس ایڈمنسٹریشن کے شعبے میں تعاون کے لیے مفاہمت کی یادداشت کی منظوری دی گئی۔

ٹرانسپورٹ اور لاجسٹک سروسز کے وزیر، جنرل اتھارٹی آف سول ایوی ایشن کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین یا ایک نائب کو مملکت سعودی عرب کی حکومت اور جمہوریہ کانگو کی حکومت کے درمیان ہوائی نقل و حمل کی خدمات کے شعبے میں معاہدے کے مسودے پر دست خط کرنے کا اختیار دیا ہے۔

لوکل کنٹینٹ اینڈ گورنمنٹ پروکیورمنٹ اتھارٹی کے بورڈ آف ڈائریکٹرزعبد الکریم بن ابراہیم النافح، انجینئر مساعد بن سلیمان الاوہالی اور عبدالعزیز بن عبدالرحمٰن السویلم کو اتھارٹی کے کام سے متعلق شعبوں میں ماہرین اور تجربہ کار ارکان کے طور پر مقرر کیا گیا ہے۔

کابینہ نے گذشتہ مالی سال کے لیے ہیومن ریسورس ڈیولپمنٹ فنڈ، جنرل اتھارٹی برائے شماریات، لوکل کنٹینٹ اینڈ گورنمنٹ پروکیورمنٹ اتھارٹی اور کنگ فہد کاز وے اتھارٹی کے حتمی حسابات کی منظوری دی ہے۔کابینہ نے اپنے ایجنڈے میں شامل متعدد امور کا بھی جائزہ لیا اور ان کے حوالے سے ضروری طریق کاراور اقدامات کی منظوری دی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں