روبوٹک سکیورٹی کتوں کی نقاب کشائی کے بعد نیویارک میں غم وغصہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

نیویارک میں سٹی پولیس اور میئر نے روبوٹ پولیس کے ایک نئے بیڑے کا اعلان کردیا۔ اس اعلان کے بعد نیویارک میں بہت سے لوگ اشتعال میں آگئے ہیں۔ روبوٹ پولیس کے یہ نئے اہلکار شہر کی سڑکوں اور سب ویز پر گشت کریں گے۔

تینوں روبوٹس کا اعلان پہلی مرتبہ "ٹائمز سکوائر" میں کیا گیا ہے۔ یہ اعلان اس وقت کیا گیا تھا جب نیویارک کے سابق پولیس ڈیپارٹمنٹ نے اس سے پہلے لانچ کیے گئے ایک روبوٹ کی سروس اس بنا پر ختم کردی تھی کہ اسے نسل پرستی قرار دیا گیا تھا۔

برطانوی ڈیلی میل کے مطابق دوبارہ متعارف کرایا گیا روبوٹک پولیس کتا "ڈِجی ڈوگ" پولیس افسران کو خطرناک حالات میں نیویگیٹ کرنے میں مدد فراہم کرے گا۔ ان میں سے دو روبوٹ کتوں کو 7 لاکھ 50 ہزار ڈالر میں ٹیسٹ کیا جائے گا۔

اس کے علاوہ ایک ’’کے فائیو‘‘ خود مختار سکیورٹی روبوٹ بھی لانچ کیا گیا ہے ۔ ایک اور روبوٹ سٹار چیز کا ’’گارڈین ایچ ایکس‘‘ ہے۔ یہ جی پی ایس سسٹم کو استعمال کرتا ہے لوگوں اور گاڑیوں کی نگرانی کرے گا۔ بعض افراد نے روبوٹ پولیس کی لانچنگ پر اعتراض کیا اور غم و غصہ کا اظہار کیا ہے۔

میئر ایرک ایڈمز نے نیویارک شہر میں جرائم کے خاتمے کے وعدے پر اپنی مہم چلائی اور کہا ہے کہ کہ روبوٹ کتوں کو زندگیاں بچانے کے لیے استعمال کیا جائے گا۔

نیویارک سٹی پولیس ڈیپارٹمنٹ نے گزشتہ سال کے دوران جرائم کے بارے میں اپنی سالانہ رپورٹ جاری کی جس میں تقریباً ہر زمرے میں اضافہ کو ظاہر کیا گیا۔

اعدادوشمار نیویارک شہر کی جرائم سے نمٹنے کے لیے کی جانے والی کوششوں کی ایک سنگین تصویر پیش کرتے ہیں۔ نیو یارک میں جرائم کورونا وائرس وبائی امراض کے آغاز کے بعد سے بڑھ گئے ہیں۔ میئر ایڈمز نے بار بار یہ دعویٰ کیا ہے کہ اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے ان کی مہم کامیاب رہی ہے۔

جدید ترین تکنیکی آلات

نیو یارک پولیس ڈیپارٹمنٹ کے کمشنر نے کہا کہ جدید شہر کی حفاظت کے لیے افسران کو اس کام کو محفوظ اور مؤثر طریقے سے کرنے کے لیے آلات، تربیت اور ٹیکنالوجی سے لیس ہونا چاہیے۔

’’ K5 ‘‘ ایک خود مختار حفاظتی روبوٹ ہے جسے ٹیسٹنگ کے لیے نیویارک کی سڑکوں پر لایا جارہا ہے۔ ’’ کے فائیو‘‘ ایک مصنوعی ذہانت کا پروگرام استعمال کرتا ہے جو رپورٹس موصول ہونے پر حقیقی وقت میں واقعہ کی اطلاعات فراہم کرتا ہے۔ انڈے کی شکل والا یہ روبوٹ مائیکروفون، ایک کیمرہ، سونار اور لیڈر سینسر سے لیس ہے۔ یہ خود ڈرائیونگ ٹیکنالوجی کے ساتھ بھی کام کرتا ہے۔ یہ تقریباً 170 سینٹی میٹر لمبا ہے اور اس کا وزن 180 کلوگرام ہے۔ اس کی رفتار 5 کلومیٹر فی گھنٹہ ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں