سعودی عرب کے ساتھ باقاعدہ رابطہ برقرار رکھنے پر اتفاق کیا ہے: وائٹ ہاؤس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

وائٹ ہاؤس کے ترجمان نے جمعہ کو کہا ہے کہ وائٹ ہاؤس کے ایک وفد نے سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے بات چیت کے دوران یمن اور دیگر امور پر سعودی عرب کی حمایت پر زور دیا ہے۔

ترجمان نے مزید کہا کہ دونوں ممالک نے بات چیت کے دوران باقاعدہ رابطہ برقرار رکھنے پر اتفاق کیا۔

قیدیوں کا تبادلہ خوش آئند

یہ بیانات واشنگٹن کی جانب سے یمنی حکومت اور یمن میں حوثیوں کے درمیان قیدیوں کے تبادلے کے عمل کا خیر مقدم کرنے کے چند گھنٹے بعد سامنے آئے ہیں۔

وائٹ ہاؤس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ یمن میں قیدیوں کے تبادلے کے عمل کا خیر مقدم کرتا ہے اور ملک میں تنازع کے سفارتی حل پر زور دیتا ہے۔

سعودی عرب میں امریکی حکام

سعودی وزارت خارجہ نے اعلان کیا تھا کہ وائٹ ہاؤس کے چیف ایڈوائزر برائے مشرق وسطیٰ بریٹ میک گرک اور امریکی ایلچی برائے توانائی کے تحفظ آموس ہوچسٹین جمعرات کو سعودی عرب پہنچے اور انہوں نےسعودی وزیر خارجہ فیصل بن فرحان سے ملاقات کی تھی۔

"ایک بہت نتیجہ خیز ملاقات"

گذشتہ منگل کو ریپبلکن سینیٹر لنڈسے گراہم نے تصدیق کی کہ شہزادہ محمد بن سلمان کے ساتھ ان کی ملاقات بہت نتیجہ خیز رہی۔

گراہم نے "امریکی انتظامیہ اور کانگریس میں ریپبلکنز اور ڈیموکریٹس کے ساتھ مل کر امریکہ سعودی تعلقات کو اگلی سطح تک بڑھانے کی خواہش کا اظہار کیا۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں