سوڈانی وزیرکو صدمہ؛گھر پرگرنیڈ حملے میں خاندان کے 2 افراد اور 2 محافظوں کی ہلاکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوڈان میں جاری حالیہ پرتشدد واقعات میں وزیر معدنیات محمد بشیرعبداللہ ابونمو نے اپنے خاندان کے دو افراد کے علاوہ 3 دیگر قریبی عزیزوں کو کھو دیا ہے۔ان میں ان کے دو محافظ بھی شامل تھے۔ وہ دارالحکومت خرطوم میں اپنے گھر کے اندر کمروں میں موجود تھے اورمتحارب فریقوں کے درمیان لڑائی میں دو راکٹ گرنیڈوں کا نشانہ بن گئے۔

وزیر نے ٹویٹر اور فیس بک پر اپنے پیاروں کی شناخت ظاہر کیے بغیر پوسٹ کیا کہ دو گولے اتوار کی صبح ان کے گھر پرآن گرے تھے جس سے ’’میرے خاندان کے دو ارکان اور دو محافظوں سمیت تین دیگرافراد ہلاک ہوگئے ہیں-وہ گھر کے اندر ایک کمرے میں تھے‘‘۔

عبداللہ ابو نمو کے لیے ایک ماہ سے بھی کم عرصے میں یہ تیسرا صدمہ ہے۔ 28 مارچ کوانھوں نے سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ میں اپنے بھائی ابراہیم بشیر عبداللہ کی قدرتی موت کی افسوس ناک خبرکی اطلاع دی تھی۔

واضح رہے کہ ہفتے کی صبح اور اتوار کو خرطوم میں، لیفٹیننٹ جنرل عبدالفتاح البرہان کی قیادت میں فوجی دستوں اور ان کے سابق اتحادی محمد حمدان دقلو کے وفادار نیم فوجی دستوں پرمشتمل سریع الحرکت فورسز کے درمیان جھڑپیں شروع ہوئی تھیں، جو اچانک خونریز مسلح تصادم میں تبدیل ہوگئیں۔ان میں اب تک 100 سے زیادہ شہری ہلاک اور سیکڑوں زخمی ہوچکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں