دل دہلا دینے والی ویڈیو،خرطوم ہوائی اڈے پر بمباری سے طیارے جل کر خاکستر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سوڈان کی مسلح افواج اور سریع الحرکت فورسز کے درمیان مسلسل جھڑپوں کے نتیجے میں خرطوم کے ہوائی اڈے پر کھڑے طیاروں کو بے پناہ نقصان پہنچا ہے۔ سیٹلائٹ کی تصاویر میں سوڈانی دارالحکومت خرطوم میں فضائی حملوں سے ہونے والے نقصان اور تباہی کے ہولناک مناظر دکھائے گئے ہیں۔

رائیٹرزکے مطابق شہر کے اندر بین الاقوامی ہوائی اڈے کی سیٹلائٹ تصاویر نے تباہ شدہ طیارے اور آس پاس کی جلی ہوئی عمارتوں کو دیکھا جا سکتا ہے۔

ماکسار کی طرف سے شائع کردہ تصاویر میں نیل الابیض برج کے قریب سڑکوں پر رکاوٹیں اور شہر کے چار اہم اسپتالوں میں سے ایک کو پہنچنے والے نقصان کو بھی دکھایا گیا ہے۔

جھڑپوں کے پس منظر میں کئی فضائی کمپنیوں نے خرطوم کے لیے اپنی پروازیں معطل کر دی ہیں۔

ہلاکتوں کی تعداد 180 ہوگئی

سوڈانی فوج اور سریع الحرکت فورسز کے درمیان دارالحکومت خرطوم اور ملک کے دیگر علاقوں میں گذشتہ ہفتے سے جھڑپیں جاری ہیں۔ ذرائع ابلاغ نے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے نمائندے ولکر پیریٹز کے حوالے سے بتایا کہ جھڑپوں میں اب تک 180 افراد ہلاک اور 1800 زخمی ہو چکے ہیں۔

متحارب فوجوں نے پیر کے روز اپنی اپنی فتوحات کا دعویٰ کیا۔ خرطوم میں کئی ایک مقامات پر دھواں اٹھے دیکھا جا سکتا ہے۔ مقامی آبادی نے فضائی حملوں، توپ خانے کی فائرنگ اور گولیوں کی آوازوں کی اطلاع دی جس سے بنیادی خدمات منقطع ہو گئیں اور تشدد کے غیر عادی شہر میں اسپتالوں کو شدید نقصان پہنچا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں