نماز جمعہ اور نماز عید ایک ہی دن آجائیں تو کیا کیا جائے؟

عید کی نماز ادا کرنے سے نماز جمعہ سے کسی صورت استثنی نہیں ملتا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اس سال سعودی عرب اور مختلف ملکوں میں عید الفطر جمعہ کے روز ہی منائی جارہی ہے۔ ان ملکوں میں جمعہ اور عید کی نماز ایک ہی دن پڑھی جارہی ہے۔ اس حوالے سے بعض افراد یہ بھی خیال کرتے ہیں کہ یہ دونوں نمازیں اس روز اکھٹی ادا کی جاسکتی ہیں۔ تاہم یاد رہے نماز جمعہ اور عید کی نماز اسلام میں دو الگ الگ نمازیں ہیں اور اسلام میں ان کا ایک ساتھ ادا کرنا مقصود نہیں ہے۔
بعض افراد نے یہ خیال باندھ رکھا ہے کہ جمعہ کے دن عید کی نماز پڑھنے والے مسلمانوں کو جمعہ کی نماز میں شرکت نہ کرنے کی اجازت ہے اور وہ جمعہ کی جگہ صرف ظہر کی نماز ادا کرکے اپنا فرض ادا کرسکتے ہیں۔ لیکن بہتر اور افضل ان کے لیے بھی یہ ہے کہ وہ نماز جمعہ ادا کریں۔
تاہم اوپر ذکر کردہ موقف درست نہیں ہے۔ یہ دونوں نمازیں الگ الگ ہیں اور نماز عید میں شرکت کے بعد جمعہ کی نماز ساقط ہونے کا کوئی تصور موجود نہیں ہے۔ علمائے کرام کا کہنا ہے کہ جو لوگ عید کی نماز نہیں پڑھتے وہ جمعہ کی نماز میں شرکت سے مستثنیٰ نہیں ہیں۔
یہ نوٹ کرنا ضروری ہے کہ عید منانے کا صحیح طریقہ اور نماز کے اوقات اسلامی روایت اور مقامی کمیونٹی کے لحاظ سے مختلف ہو سکتے ہیں۔ مسلمانوں کو عید اور جمعہ کی نماز کے اوقات اور طریقہ کار کے بارے میں اپنی مقامی مسجد یا مذہبی اتھارٹی اور مقامی علمائے کرام کی رہنمائی پر عمل کرنا چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں