فرانس نے سوڈان سے شہریوں اورسفارت کاروں کے انخلا کاآپریشن شروع کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فرانس نے سوڈان سے اپنے شہریوں اور سفارتی عملہ کے انخلا کاآپریشن شروع کردیا ہے۔

فرانسیسی وزارت خارجہ نے اتوارکوایک بیان میں کہا ہے کہ اس نے ’’انخلا کا تیز رفتارآپریشن‘‘شروع کیا ہے اوریورپی شہریوں اور’’اتحادی شراکت دار ممالک‘‘کے لوگوں کی بھی مدد کی جائے گی۔

ایک سفارتی ذریعے نے نام ظاہرنہ کرنے کی شرط پر خبررساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ سوڈان کی مسلح افواج اوران کے حریف نیم فوجی گروپ سریع الحرکت فورسز(آر ایس ایف) نے غیرملکیوں کے انخلا کےآپریشن کے لیے’سکیورٹی کی گارنٹی‘ دی تھی۔اسی ذریعے نے بتایا کہ سوڈان میں قریباً 250 فرانسیسی شہری رہتے ہیں۔

امریکی صدرجوبائیڈن نے ہفتے کے روز کہاتھاکہ امریکی فوج نے خرطوم سے سفارت خانہ کے عملہ کو نکالنا شروع کردیا ہے۔

سوڈانی فوج کے سربراہ جنرل عبدالفتاح البرہان کے زیرکمان افواج اور ان کے سابق نائب محمد حمدان دقلو کی سریع الحرکت فورسز(آر ایس ایف) کے درمیان لڑائی 15 اپریل کو شروع ہوئی تھی۔عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے مطابق تشدد میں 420 افراد ہلاک اور 3700 زخمی ہوچکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں